رسائی کے لنکس

logo-print

غیر قانونی کرنسی ڈیلروں کے خلاف کریک ڈاؤن


غیر قانونی کرنسی ڈیلروں کے خلاف کریک ڈاؤن

وزیرداخلہ رحمن ملک نے کہا ہے کہ حکومت نے ملک سے سرمائے کی غیر قانونی منتقلی اور آمد کو روکنے کے لیے کریک ڈاؤن شروع کردیا ہے اور کسی بھی غلط ذریعے سے بھیجا جانے والا پیسہ ضبط کرلیا جائے گا۔

جمعے کو اسلام آباد میں صحافیوں سے باتیں کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ اب تک اس ضمن میں جو کارروائی کی گئی ہے اس کے باعث سٹیٹ بینک کی رپورٹ کے مطابق روپے کی قدر میں 50 پیسے کا اضافہ ہوا ہے۔

انھوں نے بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کو متنبہ کیا کہ حکومت غیر قانونی ذریعوں سے پیسے کے لین دین میں ملوث بڑے ڈیلروں پر ہاتھ ڈالنے جارہی ہے اور اگر بیرون ملک سے ہنڈی کے ذریعے پیسہ ملک میں بھیجا جاتا ہے تو” وہ رقم خطرے میں پڑ سکتی ہے“۔

ایک سوال کے جواب میں رحمن ملک نے بتایا کہ بلدیاتی نظام کے بارے میں پیپلز پارٹی کی اتحادی جماعت ایم کیوایم کے تحفظات دور کردیے گئے ہیں اور اب اس کا بل پیر کو سندھ اسمبلی میں پیش کردیا جائے گا جس کے بعد ایڈمنسٹریٹرز کا تقرر کیا جائے گا۔

گذشتہ سال لاہور میں سری لنکا کی کرکٹ ٹیم پر دہشت گردانہ حملے کی تحقیقات کے بارے میں سوال کا جواب دیتے ہوئے وزیرداخلہ نے کہا کہ سری لنکا نے اس ضمن میں عندیہ دیا تھا کہ اس کے پاس واقعے سے متعلق پیسوں کے لین دین کے سلسلے میں کوئی معلومات موجود ہے لیکن رحمن ملک کے مطابق جب پاکستان سے ایک ٹیم معلومات حاصل کرنے کے لیے وہاں گئی تو سری لنکا کی حکومت نے کسی مجبوری کی بنا پر یہ معلومات فراہم نہیں کی۔

انھوں نے کہا کہ اس ہفتے انھوں نے سری لنکا کے سفیر سے ملاقات کرکے مذکورہ معلومات فراہم کرنے کی درخواست دوبارہ پیش کی ہے۔

XS
SM
MD
LG