رسائی کے لنکس

logo-print

دہشت گردی کی روک تھام پر امریکہ بھارت معاہدہ


بھارت میں امریکی سفیر ٹیموتھی رومر

بھارت اور امریکہ نے جمعے کے روز نئی دہلی میں دہشت گردی کی روک تھام کی ایک مفاہمت پر دستخط کیے ہیں جس کا مقصد دہشت گردی کے خلاف جنگ ، دہشت گردانہ سرگرمیوں کے لیے سرمائے کی فراہمی کو روکنا، بم دھماکوں کی مشترکہ تحقیقات اور سائبر اور سرحدی سلامتی کو یقینی بنانے میں باہمی تعاون کوتیز کرنا ہے۔

اس مفاہمت نامے پر بھارت میں امریکہ کے سفیر ٹیموتھی رومر اور بھارتی وزیر داخلہ نے دستخط کیے۔ اس موقع پر امریکی سفیر نے کہا کہ اس مفاہمت نامے پر باضابطہ دستخط کے ساتھ ہی ہم نے انسداد دہشت گردی کے سلسلے میں متعدد اہم اقدامات کیے ہیں۔

امریکی سفیر کا کہنا ہے ان دستخطوں کے بعد امریکہ اور بھارت کے درمیان آنے والے دنوں میں بم دھماکوں کی تفتیش اور بڑے پروگراموں کی سیکیورٹی سے لے کر شہروں میں پویس کے نظم وضبط ، سائبر سیکیورٹی اور سرحدوں کے تحفظ سمیت متعدد معاملات میں باہمی تعاون اور اطلاعات کے تبادلے میں مزید تیزی آئے گی۔

ٹموتھی رومر نے اس معاہدے کو دشت گردی کے خلاف دونوں ملکوں کے ناگزیر اشترک کی علامت قرار دیا۔

نومبر2009 میں امریکہ کے دورے میں بھارتی وزیراعظم ڈاکٹر من موہن سنگھ اور امریکی صدر براک اوباما نے اپنے اپنے ملکوں کی مشترکہ اقدار کے تحفظ کےساتھ دہشت گردی سے مؤثر طورپر نمٹنے کی کوششوں میں اضافے کا عہد کیا تھا۔ یہ معاہدہ اسی کی ایک کڑی ہے۔

XS
SM
MD
LG