رسائی کے لنکس

logo-print

افغان طیارے کے ملبے کی جگہ سے زندگی کے آثار نہیں ملے


افغان وزیر برائے شہری ہوابازی محمدالله باتش کے مطابق اس ہفتے کے اوائل میں کابل کے شمال میں گر کر تباہ ہونے والے مسافر بردار طیارے کا ملبہ تلاش کرنے والی ٹیمیں جمعہ کے روز حادثے کی جگہ پہنچ گئی ہیں مگر ابتدائی طور پر مسافرین اور عملے کے ارکان میں سے کسی کے زندہ بچ جانے کے کوئی آثار نظر نہیں آ رہے ہیں۔

ایک روزقبل اتحادی افواج کے ایک ہوائی جہاز کی مدد سے پامیر ایئرویز کے اس طیارے کے ملبے کا سراغ لگایا گیا تھااور فضا سے لی گئی تصاویر میں طیارے کی دم اور باقی ملبہ کابل کے نزدیکی پہاڑی سلسلے پر بکھرا دیکھائی دے رہا تھا۔

افغان وزیر کا کہنا ہے کہ ملبے سے کچھ مسافروں کی لاشیں مل گئی ہیں۔حادثے کا شکار ہونے والے اس طیارے پر تین برطانوی اور ایک امریکی شہری سمیت 43 افراد سوار تھے ۔

حکام کے مطابق خراب موسم کے باعث تلاش کی کارروائی کرنے والے افراد کو مشکلات کا سامناکرنا پڑ رہا ہے۔

تا حال اس حادثے کی وجوہات کی تصدیق نہیں ہو سکی ہے۔

XS
SM
MD
LG