رسائی کے لنکس

logo-print

ہلری کلنٹن برما کے تاریخی دورے پر


ہلری کلنٹن کی برما آمد

امریکی وزیر خارجہ ہلری کلنٹن بدھ کو ایک تاریخی دورے پر برما پہنچی ہیں جو کہ 50 سالوں میں خارجہ امور کے کسی بھی اعلیٰ ترین عہدیدار کا پہلا دور ہ ہے۔

اپنے تین روزہ دورے کے دوران وہ برما کے صدر تھیئن شیئن اور جہوریت پسند رہنما آنگ سان سوچی سے بھی ملاقات کریں گی۔

برما آمد سے قبل ہلری کلنٹن نے جنوبی کوریا میں صحافیوں سے باتیں کرتے ہوئے کہا تھا کہ وہ بذات خود برما کی موجودہ حکومت کی سیاسی و اقتصادی اصلاحات کے ارادے جانچنا چاہتی ہیں۔

برما میں تقریباً چار دہائیوں تک قائم رہنے والی آمریت کے بعد رواں سال کے اوائل میں سول حکومت قائم ہوئی تھی۔

امریکہ اور دیگر مغربی ملکوں نے برما پر انسانی حقوق کی پامالی اور جمہوری اصلاحات نافذ کرنے میں ناکامی کے باعث پابندیاں عائد کی تھیں۔

امریکی صدر براک اوباما کا کہنا تھا کہ اگر برما جمہوری انداز میں اپنا سفر جاری رکھتا ہے تو وہ واشنگٹن کے ساتھ نئے تعلقات بنا سکتا ہے۔ لیکن انھوں نے متنبہ کیا کہ اگر حکومت اس میں ناکام ہوتی ہے پابندیاں جاری رہیں گی۔

XS
SM
MD
LG