رسائی کے لنکس

logo-print

ہلری کلنٹن انڈونیشیا اور چین کے دورے پر


امریکی وزیر خارجہ ہلری کلنٹن

ہلری کلنٹن کے اس دورے میں شامل ایک عہدے دار کا کہناہے کہ مزکلنٹن نے کہاہے کہ وہ سمندری حدود پر چین کے دعوؤں کے تنازع کے حل کے لیے جنوبی ایشیائی اقوام کی 10 رکنی تنظیم میں یکجہتی دیکھنے کی خواہش رکھتی ہیں

امریکی وزیر خارجہ ہلری کلنٹن پیر سے اپنے ایشیا کے دورے کا آغاز انڈونیشیا سے کررہی ہیں جہاں وہ بحیرہ جنوبی چین سے متعلق علاقائی حدود کے تنازع کے حل کے سلسلے میں ایک علاقائی منصوبے پر اپنی حمایت کا اظہارکریں گی۔

وزیر خارجہ کے اس دورے میں شامل ایک عہدے دار کا کہناہے کہ مزکلنٹن نے کہاہے کہ وہ سمندری حدود پر چین کے دعوؤں کے تنازع کے حل کے لیے جنوبی ایشیائی اقوام کی 10 رکنی تنظیم میں یکجہتی دیکھنے کی خواہش رکھتی ہیں۔

وسائل سے مالامال ان جزائز پرملکیت کے تنازع کے حل کے لیے امریکی محکمہ خارجہ تمام فریقوں کی حوصلہ افزائی کرتا ہے لیکن اس کا کہناہے کہ اس تنازع میں وہ کسی فریق کے ساتھ نہیں ہے۔

طے شدہ پروگرام کے مطابق وزیر خارجہ کلنٹن معاشی اور ٹیکنالوجی سے متعلق مسائل پر انڈونیشیا میں وہاں کے وزیر خارجہ سمیت دیگر راہنماؤں سے ملاقات کریں گی۔

ایک امریکی عہدے دار کا کہناہے کہ مزکلنٹن یہ جاننے کی بھی کوشش کریں گی کہ انڈونیشیا حال ہی میں اپنی مذہبی اقلیتوں کے خلاف ہونے والے تشدد کے واقعات کو روکنے کے لیے کیا منصوبہ بندی کررہاہے۔

امریکہ میں قائم انسانی حقوق کی تنظیم ہیومن رائٹس واچ نے اتوار کو ایک بیان میں جاری کیا ہے جس میں مزکلنٹن پر زور دیا گیا ہے کہ وہ اقلیتوں کے خلاف تشدد کی روک تھام کے لیے انڈونیشیا کی حکومت پر دباؤ ڈالیں۔ تنظیم کا کہناہے کہ انڈونیشیا کے حکام اسلامی عسکریت پسند تنظیموں کی جانب سے ہجوم کی شکل میں تشدد کوروکنے میں نام رہے ہیں۔

انڈونیشیا دنیا کا سب سے بڑا اسلامی ملک ہے۔

انڈونیشیا کے دورے کے بعد منگل کو ہلری کلنٹن دو روزہ دورے پر منگل کو چین روانہ ہوجائیں گی جہاں وہ اعلیٰ چینی قیادت سے مذاکرات کریں گی۔
XS
SM
MD
LG