رسائی کے لنکس

logo-print

پیغمبرِ اسلام کے گستاخانہ خاکوں کا مقابلہ منسوخ


نیدرلینڈ کے قانون ساز گیرٹ ولڈرز، جنہوں نے گستاخانہ کارٹونوں کا مقابلہ کرانے کا اعلان کیا تھا۔ (فائل فوٹو)

یہ مقابلہ سخت پہرے میں نیدرلینڈز کی پارلیمنٹ کی عمارت میں ان کی پارٹی کے دفتر میں ہونا تھا۔

نیدرلینڈز کے اسلام مخالف قانون ساز گیرٹ ولڈرز نے کہا ہے کہ انہوں قتل کی دھمکیوں اور ان خدشات کے پیش نظر کہ دوسرے لوگ خطرات میں گھر سکتے ہیں، پیغمبر اسلام کے کارٹون بنانے کا طے شدہ مقابلہ منسوخ کر دیا ہے۔

جمعرات کو جاری ہونے والے ایک تحریری بیان میں ولڈرز نے کہا کہ اسلام پسندوں کے تشدد کے خطرے سے بچنے کے لیے میں نے کارٹونوں کا مقابلہ نہ کرانے کا فیصلہ کیا ہے۔

ولڈرز نے، جو اپنے اسلام مخالف بیانات کی وجہ سے ملنے والی قتل کی دھمکیوں کے باعث کئی برسوں سے ہر وقت کڑی حفاظت میں زندگی گزار رہے ہیں، کہا ہے کہ وہ نہیں چاہتے کہ نومبر میں ہونے والے کارٹونوں کے مقابلے سے دوسروں کی زندگیاں بھی خطرے میں پڑیں۔

یہ مقابلہ سخت پہرے میں نیدرلینڈز کی پارلیمنٹ کی عمارت میں ان کی پارٹی کے دفتر میں ہونا تھا۔

اس اعلان کے نتیجے میں پاکستان میں بدھ کے روز مظاہرے ہوئے۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG