رسائی کے لنکس

logo-print

چین: چاقو کے وار سے 8 طالب علم ہلاک، 2 زخمی


حالیہ چند برسوں میں چین میں اسکول کے بچوں پر حملوں کے متعدد واقعات پیش آئے ہیں۔ (فائل فوٹو)

چین کے مرکزی صوبے ہوبے کے ایک اسکول میں چاقو بردار حملہ آور نے چاقوؤں کے وار سے آٹھ بچوں کو ہلاک کر دیا ہے۔ حملے میں دو بچے زخمی بھی ہوئے جنہیں طبی امداد دی جارہی ہے۔

خبر رساں ادارے ’اے ایف پی‘ کے مطابق ہوبے کے شہر اینشی میں پیر کو ایک حملہ آور نے کاؤینگ چی ایلیمنٹری اسکول کے طلبا کو اُس وقت نشانہ بنایا جب وہ اسکول آ رہے تھے۔

یہ حملہ ایسے وقت میں کیا گیا جب چین میں موسم گرما کی تعطیلات کے بعد اسکول دوبارہ کھلے تھے اور اسکول میں تدریسی عمل کا پہلا دن تھا۔

پولیس نے حملہ آور کو گرفتار کرلیا ہے جس کی عمر 40 برس بتائی جاتی ہے۔ حملے میں آٹھ طالب علم ہلاک اور دو زخمی ہوئے ہیں جو مقامی اسپتال میں زیر علاج ہیں۔

حکام کے مطابق اس حملے کا مقصد تعلیمی اداروں کو نشانہ بنانا تھا۔

مقامی انتظامیہ کی جانب سے جاری ایک بیان میں کیا گیا ہے حکومت اس بات کو یقینی بنائے گی کہ زخمی ہونے والے بچوں کو علاج کی بہترین سہولیات فراہم کی جائیں۔ ان زخمی بچوں کی نفسیاتی کاؤنسلنگ بھی کی جائے گی۔

البتہ حکام کی جانب سے واقعے کی تفصیلات نہیں بتائی گئیں کہ حملہ آور نے بچوں کو کیسے ہلاک کیا؟ علاوہ ازیں حکام نے ہلاک ہونے والے بچوں کی عمریں بھی ظاہر نہیں کی ہیں۔

یاد رہے کہ چین میں ایلیمنٹری اسکولوں میں پڑھنے والے اکثر بچوں کی عمریں چھ سے 13 برس کے درمیان ہوتی ہیں۔

حالیہ چند برسوں میں چین میں اسکولوں کے بچوں پر حملوں کے متعدد واقعات پیش آئے ہیں جس کے بعد اسکولوں کی سکیورٹی میں اضافہ بھی کیا گیا ہے۔ ان واقعات میں حملہ آوروں نے چھریوں اور چاقوؤں کے وار سے بچوں کو نشانہ بنایا تھا۔

رواں سال اپریل میں ہنان صوبے میں ایک چاقو بردار شخص نے ایک پرائمری اسکول میں گھس کر حملہ کیا تھا۔ جس میں دو افراد ہلاک اور دو زخمی ہوئے تھے۔ زخمی ہونے والے بچے اسکول کے طالب علم تھے لیکن ہلاک ہونے والوں کی عمریں نہیں بتائی گئی تھیں۔

اپریل 2018 میں ہونے والے حملے کو چین کی حالیہ تاریخ میں بڑا حملہ قرار دیا جاتا ہے۔ جب ایک حملہ آور نے اسکول سے گھر آنے والے بچوں پر حملہ کر کے نو بچوں کو قتل کر دیا تھا۔

اکتوبر 2018 میں چین کے صوبے سیچوان میں ایک خاتون نے چھری کے وار سے 14 بچوں کو زخمی کر دیا تھا۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG