رسائی کے لنکس

logo-print

ایران سے جوہری پروگرام پر مذاکرات آئندہ ہفتے دوبارہ شروع


فائل فوٹو

فریقین گزشتہ ماہ معاہدے سے متعلق حکمت عملی پر متفق ہو گئے اور اب وہ 30 جون تک حتمی معاہدے کی جزیات پر کام کریں گے۔

یورپی یونین نے کہا ہے کہ چھ عالمی طاقتوں اور ایران کے درمیان جوہری مذاکرات آئندہ ہفتے ویانا میں دوبارہ شروع ہو رہے ہیں۔

حکام کے مطابق یورپی یونین اور ایران کے مصالحت کار 12 مئی کو ملاقات کریں گے۔ برطانیہ، چین، فرانس، جرمنی، روس اور امریکہ کے عہدیداران 15 مئی کو مذاکرات میں شرکت کریں گے۔

فریقین گزشتہ ماہ معاہدے سے متعلق حکمت عملی پر متفق ہو گئے اور اب وہ 30 جون تک حتمی معاہدے کی جزیات پر کام کریں گے۔

ایران کو یورینیم کی افژودگی کے پروگرام میں اس حد تک کمی کرنا ہوگی جس سے وہ جوہری بم نہ بنا سکے۔ اس کے عوض اس پر عائد بین الاقوامی تعزیرات ہٹا دی جائیں گے۔

ابھی اس معاملے پر بھی کام ہونا باقی ہے کہ یہ پابندیاں کتنی جلدی ہٹائی جائیں۔ ایران کا اصرار ہے کہ حتمی معاہدہ ہوتے ہوئے یہ تعزیرات ختم کر دی جائیں۔

مغربی ملک باور کرتے آئے ہیں کہ ایران اپنے جوہری پروگرام کو ہتھیار بنانے کے لیے استعمال کر رہا ہے جب کہ تہران کا کہنا ہے کہ اس کا یہ پروگرام پرامن مقاصد کے لیے ہے۔

XS
SM
MD
LG