رسائی کے لنکس

logo-print

روسی گیس کے معاملے پر امریکہ کا یورپ کو تعزیرات کا انتباہ


یوکرین کے سربراہ، پیٹرو پوروشنکو نے متنبہ کیا ہے کہ ’نورڈ اسٹریم 2‘ کے ذریعے روس جب چاہے گا مغربی یورپ کی گیس جاری رکھتے ہوئے یوکرین اور وسط یورپ کی گیس بند کردے گا، جس حربے کے ذریعے وہ اپنے قریبی ہمسایوں کو بلیک میل کر سکتا ہے۔

برسلز میں توانائی کے موضوع پر منعقدہ ایک اجلاس کے دوران امریکی اہلکاروں نے متنبہ کیا ہے کہ ٹرمپ انتظامیہ اُن یورپی کمپنیوں کے خلاف تعزیری کارروائی کرے گی جو کریملن کی پسندیدہ ’نورڈ اسٹریم 2‘ قدرتی گیس پائپ لائن تعمیر کر رہی ہیں، جس کے ذریعے یوکرین کو نظرانداز کرتے ہوئے روس جرمنی کو توانائی کی رسد پہنچائے گا۔

’نورڈ اسٹریم 2‘ کا منصوبہ زیادہ تر پرانی پائپ لائن کی جگہ لے گا۔ یہ پائپ لائن یوکرین اور پولینڈ سے گزرے گی، جس منصوبے کو جرمن حکومت کی حمایت حاصل ہے۔ لیکن، اس کی وجہ سے وسط یورپی حکومتیں چوکنا ہوگئی ہیں، اور اُنھیں جرمن حکومت کی جانب سے ان کی تشویش کی پرواہ نہ کرنے پر افسوس ہے۔

اُنھیں ’نورڈ اسٹریم 2‘ پر اعتراض تھا، جو منصوبہ 1200 کلومیٹر تک پھیلا ہوا ہے اور روس کے شہر وائمبرگ سے جرمنی کے شہر ربمن تک جاتا ہے۔ یہ منصوبہ بحیرہ بلقان کے اندر سے گزرتا ہے، جس سے نہ صرف پرانی پائپ لائن پر اٹھنے والی خاصی مالیت پر محصول سے بچا جائے گا، بلکہ روس کے نزدیک اس کی وجہ سیاسی ہے ناکہ تجارتی۔

بیلجئم کے دارالحکومت، نکول گبسن میں توانائی کی کانفرنس میں تقریر کرتے ہوئے، امریکی محکمہٴ خارجہ کے معاون سربراہ برائے یورپ نے متنبہ کیا کہ اگر یورپی کمپنیاں اس سال کے آخر تک پائپ لائن بچھانے کا کام پھر سے شروع کریں گی، تو ان کی خلاف ’’اہم تعزیرات کا خطرہ‘‘ موجود ہے۔

گبسن نے تعزیرات کی دھمکی کے بارے میں مزید تفصیل بتانے سے گریز کیا۔ تاہم، اُنھوں نے کہا کہ امریکہ یہ بات تسلیم نہیں کرتا کہ ’نورڈ اسٹریم 2‘ کا معاہدہ طے ہوچکا ہے۔ بقول اُن کے، ’’کچھ لوگ کہتے ہیں کہ یہ امر واقعہ ہے کہ ’نورڈ اسٹریم 2‘ معاہدہ طے ہوچکا ہے۔ ہم ایسا نہیں سمجھتے۔ ہم یورپی سربراہان پر زور دے رہے ہیں کہ وہ یہ بات یقینی بنائیں کہ ’نورڈ اسٹریم 2‘ پر عمل درآمد نہ کیا جائے‘‘۔

یوکرین کے سربراہ، پیٹرو پوروشنکو نے متنبہ کیا ہے کہ ’نورڈ اسٹریم 2‘ کے ذریعے روس جب چاہے گا مغربی یورپ کی گیس جاری رکھتے ہوئے یوکرین اور وسط یورپ کی گیس بند کردے گا، جس حربے کے ذریعے وہ اپنے قریبی ہمسایوں کو بلیک میل کر سکتا ہے۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG