رسائی کے لنکس

logo-print

سیلاب زدگان کے لیے 35 کروڑ ڈالر سے زائد امداد کی ہنگامی اپیل


سیلاب زدگان کے لیے 35 کروڑ ڈالر سے زائد امداد کی ہنگامی اپیل

اقوام متحدہ اور حکومت پاکستان نے جنوبی صوبہ سندھ میں بارشوں اور سیلاب سے متاثرہ 71 لاکھ سے زائد افراد کے لیے بین الاقوامی برادری سے 35 کروڑ 70 لاکھ ڈالر امداد کی ہنگامی اپیل کی ہے۔

عالمی تنظیم کے پاکستان میں ایک اعلیٰ عہدے دار ٹیمو پکالا نے اتوار کو اسلام آباد میں ایک نیوز کانفرنس سے خطاب میں بتایا کہ یہ رقم متاثرین کی ابتدائی ضروریات پوری کرنے کے لیے درکار ہے۔

اقوام متحدہ کی ایک ترجمان عشرت رضوی نے وائس آف امریکہ سے گفتگو میں کہا کہ یہ رقم متاثرہ خاندانوں کو آئندہ 30 سے 45 روز تک خوراک، صاف پانی، عارضی ٹھکانوں اور صحت کی سہولتوں کی فراہمی کے علاوہ حفظان صحت کے اقدامات کے لیے استعمال کی جائے گی۔

’’جو بارشوں کی صورت حال ہے، اتنا بڑا رقبہ اور جتنے زیادہ لوگ متاثر ہوئے ہیں، ان کی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے دستیاب وسائل ناکافی تھے، اس لیے اقوام متحدہ عالمی برادری سے 35 کروڑ 70 لاکھ ڈالر امداد کی اپیل کر رہا ہے۔‘‘

پاکستان کی وفاقی وزیراطلاعات فردوس عاشق اعوان نے اس موقع پر ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے گفتگو میں کہا کہ ایک ماہ بعد صورت حال کا دوبارہ جائزہ لینے کے بعد بحالی کے کاموں کے لیے امداد کی اپیل کی جائے گی۔

فردوس عاشق اعوان
فردوس عاشق اعوان

’’امداد کا شفاف استعمال ایک اہم معاملہ ہے، اس کے لیے اقوام متحدہ کے ساتھ مل کر احتساب کا نظام وضع کیا گیا ہے۔ شفافیت اور احتساب اس امداد کے استعمال کے اہم جزو ہوں گے۔‘‘

متاثرہ خاندانوں تک خوراک اور دیگر سہولتوں کی فراہمی میں تاخیر کے بارے میں وزیر اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ متعلقہ اداروں کی استداد کار بڑھائی جا رہی ہے تاکہ ایسی شکایات کا ازالہ کیا جاسکے۔

آفات سے نمٹنے کے قومی ادارے ’این ڈی ایم اے‘ کے عہدے داروں کا کہنا ہے کہ صوبہ سندھ میں اس سے قبل اتنی غیر معمولی بارشوں کی مثال نہیں ملتی اور اب تک 60 لاکھ ایکڑ رقبہ زیر آب آ چکا ہے جب کہ 20 لاکھ ایکڑ رقبے پر کھڑی فصلیں تباہ ہو گئی ہیں۔

بارشوں سے 10 لاکھ سے زائد مکان یا تو مکمل طور پر منہدم ہو گئے ہیں یا پھر اُنھیں جزوی نقصان پہنچا ہے۔

وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی صوبہ سندھ کے متاثرہ علاقوں کے دورے پر ہیں جہاں وہ امدادی کارروائیوں کی نگرانی کر رہے ہیں۔

اتوار کو ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے گفتگو میں اُنھوں نے کہا کہ حکومت سیلاب زدگان کی امداد کے لیے ہرممکن اقدامات کر رہی ہے اور بڑے پیمانے پر تباہی ہونے کے سبب بین الاقوامی برادری سے بھی تعاون فراہم کرنے کی اپیل کی گئی ہے۔

XS
SM
MD
LG