رسائی کے لنکس

پاکستان: 2016ء میں دہشت گردی کے واقعات میں 956 افراد ہلاک


فائل

دنیا بھر میں دہشت گردی کے واقعات سے متعلق جاری ہونے والے ایک رپورٹ کے مطابق پاکستان میں گزشتہ سال کے دوران 736 دہشت گردی کے واقعات ہوئے جن میں 956 افراد ہلاک ہوئے۔

آسٹریلیا کے 'انسٹیٹیوٹ فار اکنامکس اینڈ پیس' کی طرف سے جاری "گلوبل ٹیرر ازم انڈیکس" کی تازہ رپورٹ کے مطابق 2015ء کے مقابلے میں گزشتہ سال پاکستان میں ہونے والے دہشت گرد ی کے واقعات میں ہونے والے مہلک واقعات میں نمایاں کمی ہوئی ہے۔

رپورٹ کے مطابق افغانستان اور شام میں بھی 2015ء کے مقابلے میں 2016ء میں دہشت گردی واقعات میں نمایاں کمی واقع ہوئی ہے اور دنیا بھر میں دہشت گردی کے سب سے زیادہ شکار پانچ ملکوں میں سے چار میں دہشت گرد حملوں میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد میں 33 فیصد کمی ہوئی ہے۔

اگرچہ دنیا بھر میں دہشت گرد حملوں میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد میں مسلسل دوسرے سال کمی ہوئی ہے لیکن 2016ء میں دہشت گردی کا شکار ہونے والے ملکوں کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے۔

رپورٹ کے مطابق حملوں اور ان میں ہونے والی ہلاکتوں کے حوالے سے عراق سرفہرست رہاجہاں 2،965 حملوں میں 9،765 افرادمارے گئے۔

رپورٹ کے مطابق دہشت گرد حملوں میں ہونے والی اموات میں کمی اس بات کا مظہر ہے کہ شدت پسندی اور انتہاپسندی کے خلاف جاری کارروائیوں کی وجہ سے دہشت گردی کے واقعات میں بھی کمی آئی ہے۔

پاکستان کو گزشتہ ایک دہائی سے زائد عرصے سے دہشت گردی اور انتہاپسندی کا سامنا رہا ہے تاہم حالیہ سالوں میں ملک بھر میں سیکیورٹی فورسز اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کی کارروائیوں کی وجہ سے ملک میں دہشت گردی کے وقعات میں نمایاں کمی واقع ہوئی ہے اور حکام کا کہنا ہے کہ ملک سے دہشت گردی کے مکمل خاتمے تک یہ کارروائیاں جاری رہیں گے۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG