رسائی کے لنکس

logo-print

زہریلے فضلے سے دریائے دینیوب میں ماحولیاتی نقصانات کا خطرہ


زہریلے فضلے سے دریائے دینیوب میں ماحولیاتی نقصانات کا خطرہ

ہنگری میں حکام نے بتایا ہے کہ ایک شکستہ ذخیرے سے خارج ہونے والا زہریلا فضلہ دریائے دینیوب تک پہنچ گیا ہے جس کی وجہ سے ایک ماحولیاتی سانحہ رونما ہونے کا خدشہ ہے۔

یہ کاسٹک فضلہ اِس آبی گزرگاہ سے گزرتے ہوئے بلیک سی میں گرنے سے پہلے کروشیا، سربیا ، رومانیہ، بلغاریہ، یوکرائن اور مول دووا میں ماحولیاتی نقصانات کا باعث بن سکتا ہے۔

پیر کو ہنگری کے دارالحکومت بڈاپسٹ سے تقریباً ایک سو ساٹھ کلومیٹر جنوب مغرب میں واقع علاقے اجکا میں ایک صنعتی تنصیب میں فضلے کے انتہائی بڑے ذخیرے میں شگاف پڑ گیا تھا اور اس حادثے میں چار افراد ہلاک اور ایک سو بیس زخمی ہو گئے تھے۔

حکام کے مطابق تنصیب کے قریب کولونتار اور متعدد علاقے دس لاکھ کیوبک میٹر سے زائد زہریلے فضلے کی زد میں آگئے جس سے وہاں موجود مویشی ہلاک اور فصلیں تباہ ہو گیئں۔

ہنگری میں ماحولیات سے متعلق سیکرٹری زولٹن آئلیس (Zoltan Illes) کا کہنا ہے کہ صفائی کے عمل میں ایک برس کا عرصہ لگ سکتا ہے۔

دریائے دینیوب یورپ کا دوسرا طویل ترین دریا ہے۔

XS
SM
MD
LG