رسائی کے لنکس

logo-print

مشرقی بھارت میں عیسائی راہبہ کا قتل


مشرقی بھارت میں عیسائی راہبہ کا قتل

مشرقی بھارت میں آباد قبائلیوں کے حقوق کے لیے آواز اٹھانے والی ایک رومن کیتھولک راہبہ کو ان کے گھر میں بے دردی سے قتل کردیا گیا ہے۔

سسٹر والسا جان ، ریاست جھاڑ کھنڈ میں کوئلے کی کان کنی کے باعث بے گھر ہونے والے قبائلیوں کو مدد فراہم کرتی تھیں۔

ان کے بھائی کا کہنا ہے کہ انہیں کوئلے کی مقامی کانوں کے مالکان کی جانب سے دھمکیاں مل رہی تھیں۔ انہوں نے صحافیوں کو بتایا کہ منگل کی رات ضلع پاکور میں واقع ان کے گھر پر تقریباً 50 افراد نے دھاوا بولا اور انہیں ہلاک کردیا۔

پولیس نے راہبہ کے قتل کے سلسلے میں ابھی کسی کو گرفتار نہیں کیا ۔

بھارت میں کان کنی کا شعبہ ایک عرصے سے بڑے پیمانے پر بدعنوانی کے الزامات کی زد میں ہے۔

بے گھر دیہاتیوں کے حقوق کے لیے جدوجہد کرنے والی انسانی حقوق کے کارکن یہ مطالبہ کرتے آئے ہیں کہ غربت کے شکار ان طبقات کو کان کنی کی کمپنیاں اپنے منافع میں حصہ ادا کریں۔

XS
SM
MD
LG