رسائی کے لنکس

logo-print

بھارتی شہروں کی آبادی2030ء تک دوگنی ہوجائے گی


ممبئی

ماہرین کے ایک بین الاقوامی گروپ کا کہنا ہے کہ بھارت کے شہروں میں رہنے والے لوگوں کی تعداد2030 تک تقریباً دوگنی ہوکر 60 کروڑ کے قریب ہوجائے گی، اور یہ صورتِ حال ‘شہری افراتفری’ سے بچنے کےلیے حکومت سے بہت زیادہ سرمایہ لگانے کا تقاضا کرتی ہے۔

میک کِنزی گلوبل انسٹی ٹیوٹ نے جمعرات کے روز جو رپورٹ جاری کی ہے اُس میں کہا گیا ہے کہ بھارت میں شہروں کی آبادی اس لیے بڑھ رہی ہے کہ لاکھوں لوگ اچھےاقتصادی مواقع کی تلاش شہروں میں منتقل ہورہے ہیں۔

گروپ نے کہا ہے کہ 20 سال کے اندر اندر بھارت میں68 شہر ایسے ہوں گے جن میں سے ہر ایک کی آبادی 10 لاکھ سے زیادہ ہوگی اور چھ شہر ایسے ہوں گے جن کی آبادی ایک کروڑ یا اس سے بھی زیادہ ہوگی۔

گروپ نے کہا ہے کہ شہروں میں تیزی سے بڑھتی ہوئى آبادی کو قابو میں رکھنے کے لیے زیادہ موثر پالیسیوں کی ضرورت ہے۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اگر بھارت نے اپنی موجودہ پالیسیوں کو جاری رکھا تو پینے کے پا نی اور بجلی کی فراہمی کی مانند بہت سی شہری سروسیں جلد ہی مکمل ناکامی کے مقام تک پہنچ سکتی ہیں۔

XS
SM
MD
LG