رسائی کے لنکس

logo-print

اسرائیل میں انتخابات کے لیے 22 جنوری کی تاریخ پر اتفاق


اسرائیلی وزیر اعظم نے اتوار کو کابینہ کے اجلاس کی صدارت کی

اسرائیلی وزراء نے اتوار کو کابینہ کے ہفتہ وار اجلاس میں قبل ازوقت انتخابات کی تاریخ کی منظوری دی اور توقع ہے پارلیمان پیر کے اجلاس میں اس کی توثیق کر دے گی۔

اسرائیل کی کابینہ نے ملک میں عام انتخابات 22 جنوری کو کرانے پر اتفاق کیا ہے، اور رائے عامہ کے جائزوں کے مطابق امکان ہے کہ وزیر اعظم بینجمن نیتن یاہو جیت جائیں گے۔

اسرائیلی وزراء نے اتوار کو کابینہ کے ایک ہفتہ وار اجلاس میں قبل ازوقت انتخابات کی تاریخ کی منظوری دی۔

وزیر اعظم نیتن یاہو نے منگل کو ایک بیان میں کہا تھا کہ وہ اپنی مدت پوری ہونے سے آٹھ ماہ قبل انتخابات کا انعقاد چاہتے ہیں کیونکہ حکمران اتحاد 2013ء کے ریاستی بجٹ کی منظوری دینے سے قاصر ہے۔

توقع ہے کہ اسرائیل کی پارلیمان پیر کو ہونے والے اپنے اجلاس میں قبل ازوقت انتخابات کی منظوری دے گی۔

رائے عامہ کے اکثر جائزوں کے مطابق نیتن یاہو کی سیاسی جماعت نئی پارلیمان میں سب سے بڑی قوت بن کر سامنے آئے گی جو سبکدوش ہونے والی انتظامیہ کی طرح قوم پرستوں اور مذہبی جماعت پر مشتمل مخلوط حکومت کی قیادت کرے گی۔

نیتن یاہو 1990 کی دہائی کے اواخر میں تین سالہ مدت کے لیے ملک کے وزیر اعظم تھے, اور 2009 کے انتخابات کے بعد اُنھوں نے وزارت عظمٰی کا منصب دوبارہ سنبھالا تھا۔ اُن کی سربراہی میں مخلوط حکومت نسبتاً مستحکم رہی کیونکہ اسرائیل میں منقسم پارلیمانوں نے شاذ ونادر ہی اپنی چار سالہ مدت پوری کی ہے۔
XS
SM
MD
LG