رسائی کے لنکس

logo-print

جوہری بجلی کے خلاف ٹوکیو میں ہزاروں افراد کا مظاہرہ


جوہری بجلی کے خلاف ٹوکیو میں ہزاروں افراد کا مظاہرہ

جاپان کے دارالحکومت ٹوکیو کے وسطی حصے میں ہزاروں افراد نے پیر کو ہونے والے ایک مظاہرہ میں شرکت کی اور حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ فوری طور پر جوہری بجلی کی پیداوار بند کردے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ ریلی میں 20 ہزار کے لگ بھگ افراد نے شرکت کی اور یہ رواں برس مارچ میں آنے والے زلزلے اور سونامی کے نتیجے میں 'فوکو شیما جوہری بجلی گھر' کی تباہی کے بعد سے اب تک ہونے والا سب سے بڑا مظاہرہ تھا۔

ریلی کے منتظمین نے شرکاء کی تعداد پولیس کے بیان سے کہیں زیادہ بتائی ہے۔

مظاہرے کے شرکاء سے خطاب میں رہنما یاسو ناری فیوجی موٹو کا کہنا تھا کہ مظاہرین جوہری بجلی کا استعمال بند کرنے سے متعلق حکومت کی واضح یقین دہانی چاہتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے جوہری بجلی کی پیداوار بند کرنے سے متعلق ڈیڈ لائن دینے کے نتیجے میں توانائی کے متبادل ذرائع پر عوام کا انحصار بڑھے گا۔

جاپان کے موجودہ وزیرِاعظم یوشی ہیکو نوڈا اور ان کے پیش رو ناؤتو کان پہلے ہی کہہ چکےہیں کہ جاپان جوہری بجلی کے استعمال سے نجات حاصل کرنا چاہتا ہے۔ تاہم دونوں رہنماؤں کے بقول جاپان کا جوہری بجلی پر بے تحاشا انحصار ہے جس سے مرحلہ وار چھٹکارا ہی ممکن ہے۔

XS
SM
MD
LG