رسائی کے لنکس

logo-print

شمالی کوریانے جنوبی کوریا کے ساتھ فوجی سمجھوتے ختم کر نے کی دھمکی دے دی


ایسے میں جب دونوں ملکوں کوجنوبی کوریا کے بحری جنگی جہاز کو ڈبونے کا تنازع درپیش ہے، شمالی کوریا نے دھمکی دی ہے کہ وہ جنوبی کوریا کے ساتھ اُس معاہدے کو منسوخ کردے گا جس کا مقصد سرحدی تنازعات کی روک تھام ہے۔

شمالی کوریا کے سرکاری خبر رساں ادارے نے جمعرات کو خبر دی ہے کہ شمالی کوریا دونوں ملکوں کے مابین متنازع مغربی سمندری سرحد پر حادثاتی لڑائیوں کو روکنے کے رائج سمجھوتے کو منسوخ کر رہا ہے۔

اُس نے خبردار کیا ہے کہ متنازع سرحد کی کسی خلاف ورزی پر جنوبی کوریا کے جہاز حملے کی فوری زد میں آجائیں گے۔

شمالی کوریا نے یہ دھمکی بھی دی ہے کہ جنوبی کوریا کی طرف سےسخت پہرے والی سرحد کو عبور کرنے کی صورت میں خلاف ورزی پر سلامتی کی دی ہوئی تمام ضمانتیں معطل سمجھی جائیں ۔

مارچ میں ‘چیونان’ نامی بحری جہاز کو تارپیڈو حملے میں ڈبونے کے واقعے میں، جِس میں 46جہازراں ہلاک ہوئے تھے، جوابی کارروائی میں جنوبی کوریا کی طرف سے لگائی جانے والی پابندیوں پر پیانگ یانگ نے اپنی ناراضگی کا اظہار کیا ہے۔

بین الاقوامی تفتیش کاروں نے حملے کا ذمہ دار شمالی کوریا کی آب دوز کو ٹھہرایا ہے، جس الزام کو پیانگ یانگ مسترد کرتا ہے۔

اپنی سبقت کے اظہار کے طور پر جنوبی کوریا کی بحریہ نے جمعرات کو متنازع بحری سرحد کے جنوبی پانیوں میں آبدوز شکن بحری مشقیں کی ہیں۔

XS
SM
MD
LG