رسائی کے لنکس

logo-print

قذافی کے بعد لیبیا کے مستقبل پر غور کے لیے عالمی اجلاس


معمر قذافی اور ان کے صاحبزادے سیف الاسلام

معمر قذافی کے بعد لیبیا کے مستقبل پر بات چیت کے لیے عالمی رہنماؤں کا اجلاس جمعرات کو فرانس میں منعقد ہورہا ہے۔

پیرس میں ہونے والی اس کانفرنس میں لیبیا کی قومی عبوری کونسل کو تسلیم کرنے اور نہ کرنے والے ممالک سمیت تقریباً 60ممالک کے حکام شریک ہورہے ہیں۔

حکام کو توقع ہے کہ عبوری کونسل کے رہنما مصطفی عبدالجلیل 18ماہ میں نئے آئین کی تشکیل اور انتخابات کے انعقاد سے متعلق کوئی لائحہ عمل ترتیب دیں گے۔

فرانس کے صدر نکولس سارکوزی اور برطانیہ کے وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون کی میزبانی میں منعقد ہونے والی اس کانفرنس کے شرکا میں نیٹو کے سیکرٹری جنرل ، اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل اور امریکہ کی وزیر خارجہ بھی شامل ہیں۔ لیبیا پر نیٹو کی فضائی کارروائیوں کی مخالفت کرنے والے ممالک چین اور روس بھی اپنے نمائندے کانفرنس میں بھیج رہے ہیں۔

یہ اجلاس ایک ایسے وقت ہورہا ہے جب عبوری کونسل نے معمرقذافی اور ان کی حامی فوجوں کو ہفتہ تک ہتھیار ڈالنے اور اپنے زیر قبضہ علاقوں کا کنٹرول حوالے کرنے کی مہلت دے رکھی ہے۔

XS
SM
MD
LG