رسائی کے لنکس

logo-print

لیبیا میں شریعہ سے ہم آہنگ قانون کی بلادستی پر زور


لیبیا میں شریعہ سے ہم آہنگ قانون کی بلادستی پر زور

لیبیا میں عبوری حکومت کے سربراہ نے کہا ہے کہ عوام ایک سول اور جمہوری ریاست کی حمایت کرے جس کے آئین میں اسلامی قوانین کو بھی شامل کیا جائے۔

پیر کی شب طرابلس میں ہزاروں حامیوں کے مجمے سے خطاب میں مصطفیٰ عبد الجلیل نے کہا کہ وہ ایسی ریاست کی تشکیل میں اپنا کردار ادا کریں جہاں قانون کی بالادستی ہو۔

اُنھوں نے لوگوں سے درخواست کی کہ لیبیا کے سابق رہنما معمر قذافی کے حامیوں کے زیر قبضہ بعض علاقوں پر انتقامی حملوں سے اجتناب کیا جائے۔

قومی عبوری کونسل ’این ٹی سی‘ کے چیئرمین کا کہنا تھا کہ اُن کی انتظامیہ ایک ایسے ملک کی خواہاں ہے جہاں قانون کی پاسداری اور خوشحالی ہو اور جہاں آئین کی بنیاد اسلامی شریعہ پر ہو۔

قذافی مخالف فورسز کے طرابلس پر قبضے کے بعد مسٹر جلیل پہلی مرتبہ ہفتہ کو لیبیا کے دارالحکومت پہنچے تھے۔ اُنھوں نے شہر کے مرکزی ’’شُہدا چوک‘‘ میں اپنے پرجوش حامیوں سے خطاب کیا۔ اس مقام پر اب سے پہلے تک قذافی کی حمایت میں جلسے جلوس منعقد کیے جاتے تھے۔

XS
SM
MD
LG