رسائی کے لنکس

logo-print

یونان کے قریب تارکین وطن کی کشتیاں ڈوبنے سے سات بچے ہلاک


فائل فوٹو

اس تازہ واقعے کے بعد رواں ماہ یونان کے ساحلوں کے قریب ڈوب کر ہلاک ہونے والے تارکین وطن کی تعداد 39 ہو گئی ہے۔

یونان کے قریب تارکین وطن کی چار کشتیاں ڈوبنے سے سات بچوں سمیت کم ازکم دس افراد ہلاک ہوگئے ہیں جو کہ یورپ کی طرف تارکین وطن کے سفر کے دوران پیش آنے والا تازہ ترین ہلاکت خیز واقعہ ہے۔

یہ افراد ترکی کے راستے یونان کے جزیرے لیسبوس کے شمالی ساحل کے قریب پیش آیا۔

مقامی ٹی وی پر دکھائے جانے والے مناظر میں ڈاکٹر اور طبی عملہ بچائے گئے افراد میں سے بچوں سمیت اکثر لوگوں کو ہوش میں لانے کی کوشش کر رہیں جو پانی میں گرنے کی وجہ سے بے ہوش ہو گئے تھے۔

اس تازہ واقعے کے بعد رواں ماہ یونان کے ساحلوں کے قریب ڈوب کر ہلاک ہونے والے تارکین وطن کی تعداد 39 ہو گئی ہے۔

اس سے قبل بدھ کی صبح لیبیا کے ساحل کے قریب سے گنجائش سے زیادہ افراد کو سوار کرنے والی کشتیوں سے تقریباً ایک ہزار تارکین وطن کو وقت بچا لیا گیا۔ یہ گزشتہ تین ہفتوں کے دوران ایک ہی دن میں بچائے گئے افراد کی سب سے زیادہ تعداد ہے۔

بحیرہ روم کے راستے خستہ حال کشتیوں کے ذریعے اٹلی کے جنوبی حصے کا سفر کرنے والوں کی تعداد میں خراب موسم کی وجہ سے کمی دیکھی جا رہی ہے اور تارکین وطن اب کسی اور راستے کا انتخاب کر رہے ہیں۔

رواں سال اب تک افریقہ اور مشرق وسطیٰ سے سات لاکھ تارکین وطن کشتیوں کے ذریعے یورپ پہنچے اور ان کی بڑی تعداد یونان کے راستے یہاں آئی جب کہ ان میں سے ایک لاکھ چالیس ہزار تارکین وطن اٹلی کے راستے یورپ میں داخل ہوئے۔

XS
SM
MD
LG