رسائی کے لنکس

logo-print

صدر اوباما کا انٹرنیٹ کے ذریعے ایرانی عوام سے خطاب


نئے ایرانی سال نوروز کے موقع پر امریکی صدر باراک اوباما نے ایرانی عوام سے انٹرنیٹ کے ذریعے خطاب کیا ہے۔

جمعے کو رات گئے وائٹ ہاؤس سے جاری ہونے والے انٹرنیٹ وڈیوپیغام میں صدر اوباما نے ایران سے مذاکرات کی اپنی پیش کش کو دہرایا مگر ان کے بقول ایرانی رہنماء نے ”علیحدرہنے“ کو منتخب کیا ہے۔

انھوں نے کہا کہ ایران اپنے جوہری پروگرام کی حدود اور مقاصد عیاں نہ کرکے عالمی ذاریوں سے روگردانی کررہا ہے اور امریکہ بین الاقوامی برادری کے ساتھ مل تہران کو اس کی ذمہ داریوں کا احساس دلانے کے لیے کام کررہا ہے۔

واضح رہے کہ امریکہ اور مغربی ممالک ایران پر جوہری ہتھیار تیار کرنے کا الزام عائد کرتے ہیں جب کہ ایران کا کہنا ہے کہ اس کا جوہری پروگرام سول توانائی سے متعلق ہے۔

اس تنازع کے باوجود صدراومابا نے کہا کہ امریکہ ایرانی عوام کے لیے تعلیمی مواقعوں میں اضافوں اور بغیر سنسر کے انٹرنیٹ کی فراہمی سے ایک زیادہ پرامید مستقبل کے لیے پرعزم ہے۔

ایرانی عوام سے صدر اوباما کا یہ دوسرا پیغام ہے ۔ اس سے قبل گذشتہ سال نوروز کے موقع پر خطاب میں انھوں نے ایران کے ساتھ سفارتی ذرائع سے تنازعات کو حل کرنے کے لیے اپنے عزم کا اظہار کیا تھا اور کہا تھا کہ ”کامیابی دھمکیوں کے ذریعے نہیں بلکہ باہمی احترام سے حاصل ہوگی“۔

XS
SM
MD
LG