رسائی کے لنکس

logo-print

قرآن نذر آتش کرنے کے منصوبے سے باز رہنے کی تلقین


صدر براک اوباما نے متنبہ کیا ہے کہ ریاست فلوریڈا کے ایک پادری کا نائن الیون کے موقع پر قرآن کو نذر آتش کرنے کا منصوبہ پاکستان اور افغانستان میں پرتشدد واقعات کا سبب بن سکتا ہے۔

امریکی ٹیلی ویژن چینل ABCکودیے گئے اپنے انٹرویو میں صدر اوباما نے کہا کہ قرآن نذر آتش کرنے کے واقعے سے القاعدہ کو مزید ایسے لوگوں کو بھرتی کرنے کا موقع ملے گا جو امریکی اور یورپی شہروں میں خود کش دھماکوں کے لیے تیار ہوں گے۔

انھوں نے اس امید کا اظہار کیاہے کہ قرآن نذر آتش کرنے کے منصوبہ ساز پادری ٹیری جونز ان لوگوں کے مطالبات پر کان دھریں گے جو انھیں اس فعل سے باز رہنے کا کہہ رہے ہیں کیونکہ یہ امریکی اقدار کے بھی منافی ہے۔

بقول امریکی صدر کے امریکہ کے وجود کی بنیاد آزادی اور مذہبی رواداری پر مبنی ہے۔”مجھے امید ہے کہ وہ توجہ حاصل کرنے کی اس شعبدہ بازی سے باز رہیں گے کیونکہ اس سے امریکی فوج کے مردوخواتین کی زندگیوں کو خطرات لاحق ہوسکتے ہیں“۔

XS
SM
MD
LG