رسائی کے لنکس

logo-print

پشاور کے لیے سعودی ائیر لائنز کی پروازیں عارضی طور پر معطل


سول ایوی ایشن کے ایک ترجمان نے بتایا کہ پشاور سے متعلق چار بین الاقوامی فضائی کمپنیاں اپنے مستقبل کے لائحہ عمل کا فیصلہ یکم جولائی کو کریں گی۔

پشاور کے لیے ایک اور بین الاقوامی فضائی کمپنی سعودی ائیر لائنز نے سکیورٹی کے خدشات کے باعث اپنی پروازیں عارضی طور پر روک دی ہیں۔

سول ایوی ایشن اتھارٹی کے ترجمان عابد علی نے وائس آف امریکہ سے گفتگو میں بتایا کہ سعودی ائیر لائنز نے پشاور کے لیے اپنی پروازیں اسلام آباد منتقل کر دی ہیں۔

اُنھوں نے بتایا کہ پشاور سے متعلق چار بین الاقوامی فضائی کمپنیاں اپنے مستقبل کے لائحہ عمل کا فیصلہ یکم جولائی کو کریں گی۔

عابد علی نے بتایا کہ قطر، اتحاد، سعودی اور ایمریٹس ائیر لائنز نے اپنی پروازیں اسلام آباد منتقل کی ہیں۔ ’’ابھی اُنھوں نے لکھ کر کچھ نہیں دیا ہے، یکم جولائی کے بعد بتائیں گے کہ ان کا آئندہ کا ارادہ کیا ہے۔‘‘

ان چار بین الاقوامی فضائی کمپنیوں کی طرف سے پروازوں کی عارضی معطلی کا فیصلہ رواں ہفتے پشاور کے باچا خان انٹرنیشل ائیر پورٹ پر اترنے سے چند منٹ قبل پاکستان کی قومی فضائی کمپنی ’پی آئی اے‘ کے مسافر طیارے پر فائرنگ کے واقعے کے تناظر میں کیا گیا۔

طیارے پر فائرنگ سے ایک خاتون مسافر ہلاک جب کہ دو افراد زخمی ہو گئے تھے۔

پشاور میں طیارے پر فائرنگ کے بعد پولیس نے اردگرد کے علاقوں میں کارروائی کر کے درجنوں مشتبہ افراد کو حراست میں لیا۔

اُدھر وزیراعظم نواز شریف نے جمعہ کی شب کہا کہ ملک بھر میں ہوائی اڈٓوں کی سکیورٹی بڑھا دی گئی ہے۔

’’ائیر پورٹ سکیورٹی فورس کو مستقبل میں ہر طرح کے چینلج کا مقابلہ کرنے کے لیے اس کی استعداد کار بڑھائی جا رہی ہے۔ جدید اسلحہ، جدید گاڑیاں اور (دیگر بنیادی ضروریات) میں اضافہ کیا جائے گا۔‘‘

اس سے قبل آٹھ جون کو کراچی کے جناح انٹرنیشنل ائیر پورٹ پر 10 دہشت گردوں نے حملہ کر کے سکیورٹی فورسز کے اہلکاروں سمیت کم از کم 28 افراد کو ہلاک کر دیا تھا۔

کئی گھنٹوں کی جوابی کارروائی میں تمام 10 حملہ آوروں کو بھی ہلاک کر دیا گیا تھا۔

XS
SM
MD
LG