رسائی کے لنکس

logo-print

بیٹی کو زندہ دفن کرنے کے الزام میں باپ گرفتار


فائل فوٹو

پولیس کے مطابق اس شخص نے اپنی بچی کو مردہ قرار دیتے ہوئے اس کے جنازے کے لیے لوگوں کو جمع کیا مگر اسی دوران بچی نے رونا شروع کر دیا

پاکستان کے صوبہ پنجاب کے شہر خانیوال میں نومولود بیٹی کو مبینہ طور پر زندہ دفن کرنے والے شخص کو پولیس نے گرفتار کر لیا ہے۔

مقامی پولیس کے مطابق خانیوال کے ایک گاؤں میں چاند خان نامی شخص نے جمعرات کو پیدا ہونے والی اپنی بچی کو ’’زندہ دفن‘‘ کر دیا تھا اور اس کا موقف تھا کہ بچی ’’بدصورت‘‘ تھی اور اس کی شکل بگڑی ہوئی تھی۔

پولیس کے مطابق اس شخص نے اپنی بچی کو مردہ قرار دیتے ہوئے اس کے جنازے کے لیے لوگوں کو جمع کیا مگر اسی دوران بچی نے رونا شروع کر دیا جس پر لوگوں سے اسے نومولود کو اسپتال لے جانے کو کہا مگر وہ اسے قبرستان لے جا کر دفن کر آیا۔

بعض اطلاعات کے مطابق چاند خان پر الزام ہے کہ اس نے بچی کی پیدائش کے بعد ڈاکٹروں سے اسے زہریلا انجیکشن لگانے کے لیے بھی کہا مگر ڈاکٹروں سے ایسا کرنے سے انکار کردیا۔

آپ کی رائے

تبصرے دکھائیں

XS
SM
MD
LG