رسائی کے لنکس

logo-print

پاکستانی دستاویزی فلم نے ایمی ایوارڈ جیت لیا


پاکستانی فلمساز اسد فاروقی کی دستاویزی فلم ’’آرمڈ ود فیتھ‘‘ کو سیاست اور حکومت سے متعلق دستاویزی فلموں کے مقابلے میں غیر معمولی دستاویزی فلم قرار دیتے ہوئے ایمی ایوارڈ سے نوازا گیا ہے۔

اس دستاویزی فلم کی کہانی خیبر پختونخوا کے بم کو ناکارہ بنانے والے ایک سکواڈ کے بارے میں ہے جس میں سکواڈ کے تین ارکان کی خطرات سے بھرپور پیشہ ورانہ زندگی کی عکاسی کی گئی ہے جو جدید ساز و سامان نہ ہونے کے باوجود لوگوں کی زندگیاں بچانے کی خاطر خود اپنی زندگیاں داؤ پر لگا دیتے ہیں۔

سکواڈ کے ارکان عبدالرحیم اور ٹائیگر بھائی تمام دن پولیس سٹیشن کے اندر رہتے ہوئے انتہائی ناکافی اجرت پر اس خطرناک کام میں مصروف رہتے ہیں اور اس بات پر فخر محسوس کرتے ہیں کہ وہ اپنے ملک کیلئے کچھ کر ہے ہیں۔

اس فلم کی معاون فلمساز اور دو مرتبہ آسکر ایوارڈ جیتنے والی فلمساز و ہدایت کار شرمین عبید چنائے نے پروڈیوسر اسد فاروقی کو فیس بک کے ذریعے مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ اسد فاروقی بہت برس پہلے اُن کے ساتھ کام کرنے آئے تھے جب وہ سیٹزنز آرکائیو آف پاکستان میں ایک فوٹوگرافر کی حیثیت سے کام کر رہے تھے۔ ان میں کام سیکھنے کا زبردست جذبہ اور لگن موجود تھی اور وہ بہترین شاگرد ثابت ہوئے۔

شرمین عبید نے کہا کہ اس کے بعد دونوں نے مل کر بہت سے پراجیکٹ کیے اور اب انہوں نے ہدایت کار کی حیثیت سے ایمی ایوارڈ حاصل کیا ہے۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG