رسائی کے لنکس

logo-print

بھارت کے ساتھ تجارت کے فروغ پر اہم پیش رفت


پاکستانی وزیر تجارت امین فہیم کی بھارتی وزیراعظم من موہن سنگھ سے ملاقات

وفاقی وزیر تجارت امین فہیم بھارت کے اپنے ایک ہفتے کے دورے کے بعد پیر کو وطن واپس پہنچے ہیں جہاں انھوں نے ہوائی اڈے پر صحافیوں سے باتیں کرتے ہوئے بھارتی عہدیداروں اور تاجروں سے اپنے وفد کے مذاکرات کو انتہائی مفید قرار دیا اور کہا کہ دو طرفہ تجارت کے فروغ کے سلسلے میں اہم پیش رفت ہوئی ہے۔

امین فہیم نے کہا کہ دونوں ملکوں میں کاروباری حلقوں کے درمیان رابطوں میں حائل رکاوٹوں کو دور کرنے کے لیے بھی اہم فیصلے کیے گئے ہیں۔

’’پاکستان اور بھارت کے تاجروں کو ویزوں کے اجرا کا مسئلہ تھا اور اب فیصلہ یہ ہوا ہے کہ جتنے بھی تاجر ہیں ان کو ایک سال کا ملٹی پل ویزا دیا جائے گا تا کہ آمد و رفت میں آسانی ہو۔‘‘

امین فہیم نے بتایا کہ بھارتی حکام نے یہ یقین دہانی بھی کرائی ہے کہ یورپی یونین کی طرف سے پاکستان کو دی جانے والی تجارتی رعایت پر بھارت عالمی تنظیم ’ڈبلیو ٹی او‘ کے آئندہ اجلاس میں ناصرف اپنی مخالفت ترک کر دے گا بلکہ اس معاملے پر پاکستان کی حمایت کی جائے گی۔

یورپی یونین نے 2010میں آنے والے بد ترین سیلاب کے بعد پاکستان کو تقریباً 75 مصنوعات میں چھوٹ دی تھی لیکن بھارت کی مخالفت کے بعد اس پر تا حال پیش رفت نہیں ہو سکی تھی۔

XS
SM
MD
LG