رسائی کے لنکس

logo-print

شدت پسندوں کے ٹھکانوں پرفضائی حملے


شدت پسندوں کے ٹھکانوں پرفضائی حملے

قبائلی علاقے اوکرزئی ایجنسی میں عسکریت پسندوں کے ٹھکانوں پر پاکستانی فوج کی بمبار ی سے اطلاعات کے مطابق کم از کم 10 جنگجو ہلاک اور8 سے زائد زخمی ہو گئے ہیں ۔ ایجنسی کے ڈبوری، خادی زئی، ماموزئی اور ملابڈئی میں شدت پسندوں کے ٹھکانوں پر جیٹ طیاروں سے بمباری کی گئی۔

فوجی حکام نے جون کے اوائل میں اورکزئی ایجنسی میں عسکریت پسندوں کے خلاف آپریشن کو کامیاب قرار دے کر اسے ختم کرنے کا اعلان کیا تھا۔ حکام کا کہنا تھا کہ اس قبائلی علاقے میں شدت پسندوں کے زیر استعمال بیشتر ٹھکانے اور تربیتی مرکز تباہ کر دیے گئے ہیں۔

تاہم اس کے باوجود اس قبائلی علاقے میں سکیورٹی فورسز اور شدت پسندوں کے درمیان جھڑپوں کا سلسلہ بدستور جاری ہے ۔ اورکزئی میں عسکریت پسندوں کے خلاف آپریشن میں رواں سال مارچ سے اب تک حکام نے 700سے زائد جنگجوؤں کوہلاک کرنے کا دعویٰ کیا ہے جب کہ پرتشد د جھڑپوں میں 30 سے زائد سکیورٹی اہلکار بھی جابحق ہوئے ہیں۔ آزاد ذرائع سے ان اعداد وشمار کی تصدیق نہیں ہو سکی ہے۔

صوبہ خیبر پختون خواہ کے حکام نے اس خدشے کا اظہار کیا ہے کہ اورکزئی اور وزیرستان سے فرار ہونے والے عسکریت پسند دوبارہ منظم ہو رہے ہیں تاہم صوبائی حکام کا دعویٰ ہے کہ حکومت شدت پسندوں کی ان منصوبہ بندیوں سے نہ صرف آگاہ ہے بلکہ انھیں ناکام بنانے کے لیے پوری طرح تیار ہے۔

XS
SM
MD
LG