رسائی کے لنکس

logo-print

قصور: کم عمر لڑکے لڑکیوں سے جنسی زیادتی کے الزام میں تین افراد گرفتار


گروہ میں شامل لوگ ان وڈیوز کے ذریعے متاثرہ لوگوں کو بلیک میل کر کے ان سے بھاری رقوم ہتھیاتے چلے آرہے تھے۔

پاکستان کے صوبہ پنجاب کے ایک گاؤں میں متعدد لڑکے اور لڑکیوں کو جنسی طور پر ہراساں کرنے اور انھیں دھمکا کر بھتہ وصول کرنے کے الزام میں 15 افراد کے خلاف مقدمہ درج کر کے ان میں سے تین کو گرفتار کر لیا ہے۔

مقامی ذرائع ابلاغ کے مطابق قصور کے علاقے گنڈا سنگھ والا میں ایک گروہ گزشتہ کئی برسوں سے مبینہ طور پر کم عمر لڑکے اور لڑکیوں کو جنسی زیادتی کا نشانہ بناتا اور ان کی وڈیوز بناتا آرہا تھا۔

اس گروہ میں شامل لوگ ان وڈیوز کے ذریعے متاثرہ لوگوں کو بلیک میل کر کے ان سے بھاری رقوم ہتھیاتے چلے آرہے تھے۔

وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے ان اطلاعات کا نوٹس لیتے ہوئے حکام کو فوری طور پر اس بارے میں اقدام کرنے کی ہدایت کی۔

مبینہ طور پر پولیس ان افراد کا بااثر لوگوں سے تعلق ہونے کی وجہ سے متاثرین کی شکایات کے ازالے کے لیے کارروائی نہیں کر رہی تھی جس پر گزشتہ ہفتہ درجنوں لوگوں نے تھانہ گنڈا سنگھ والا پولیس اسٹیشن کے سامنے احتجاج بھی کیا تھا۔

بعد ازاں پولیس نے متاثر ہونے والے مختلف لوگوں کی طرف سے درج کروائی گئی شکایات پر عمل کرتے ہوئے گروہ کے تین افراد کو حراست میں لے لیا جب کہ نامزد ملزمان میں سے دیگر اپنی ضمانت قبل از گرفتاری حاصل کر چکے ہیں۔

XS
SM
MD
LG