رسائی کے لنکس

logo-print

پاکستان کے یہودی شہری کی اسرائیل جانے کی خواہش کا اظہار


پاکستان سے تعلق رکھنے والے ایک یہودی شخص نے پاکستان کے اہم سیاسی اور مقتدر شخصیات سے اپیل کی ہے کہ انہیں پاکستان پاسپورٹ پر یروشلم جانے کی اجازت دی جائے۔

کراچی سے تعلق رکھنے والے فشل خالد نے اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ ملک کے اہم شخصیات کے نام لکھے گئے ایک پیغام میں ان سے درخواست کی ہے کہ انہیں پاکستان پاسپورٹ پر یرشلیم جانے کی اجازت دی جائے۔

خالد نے ٹوئیر پر یہ پیغام پاکستان کے دفتر خارجہ، اس کے ترجمان ڈاکٹر محمد فیصلہ، پاکستان تحریک انصاف کے رہنما فواد چوہدری، تحریک انصاف کے سربراہ اور پاکستان کی آئندہ ممکنہ وزیر اعظم عمران خان، پاکستان مسلم لیگ نواز کے رہنما مریم نواز، پیپلزپارٹی کے رہنما بلاول بھٹو زرداری ، پاکستان فوج کی شعبہ تعلقات عامہ کے سربراہ میجر جنرل آصف غفور اور متعدد دیگر افراد کے نام لکھا ہے۔

خالد نے اپنے پاسپورٹ کی کاپی بھی ٹوئٹر پر جاری کی ہے جس میں ان کا یہودی مذہب سے تعلق بھی ظاہر ہوتا ہے۔

خالد کی اسرائیل جانے کی خواہش کی درخواست کے بارے میں وائس آف امریکہ کی طرف سے پاکستان کے دفترخارجہ کے ترجمان محمد فیصل سے ان کا ردعمل جاننے کے لیے رابطے پر انہوں کہا کہ ایک پاکستانی شہری ہونے کے ناطے وہ اس بارے میں متعلقہ وزارت کو باضابطہ درخواست دے سکتے ہیں اور اس کے بعد ان کے بقول ان کی درخواست پر قانون کے مطابق فیصلہ کیا جائے گا۔

تاہم انہوں نے کہا " پاکستان کے پاسپورٹ پر اسرائیل کا سفر نہیں کیا جا سکتا لیکن اس کے باوجود وہ پاکستان کی وزارت داخلہ کو درخواست دے سکتے ہیں وہ کیا چاہتے ہیں اور اس کے بعد قانون کے مطابق فیصلہ کیا جائے گا۔"

واضح رہے کہ پاکستان اور اسرائیل کے درمیان سفارتی تعلقات نا ہونے کی وجہ سے پاکستان شہریوں کو جاری ہونے والے پاکستانی پاسپورٹ پر پاکستان شہری اسرائیل کے علاوہ دنیا کے تمام ملکوں کا سفر کر سکتے ہیں۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG