رسائی کے لنکس

logo-print

پی آئی اے کے جہاز کی سٹاک ہوم میں لینڈنگ


پی آئی اے کے جہاز کی سٹاک ہوم میں لینڈنگ

پاکستان کی قومی فضائی کمپنی پی آئی اے کی کینیڈا سے کراچی آنے والے طیارے میں دھماکا خیز مواد کی موجودگی کی اطلاع کے بعد ہفتے کی صبح جہاز کو سویڈن کے شہر سٹاک ہوم میں اتار لیا گیا۔

پی آئی اے کے ترجمان سلطان حسن نے سرکاری ٹی وی کو تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ پرواز نمبر PK-782نے ٹورنٹو سے جب اڑان بھری تو ایک خاتون نے پولیس کو اطلاع دی کہ جہاز میں ایک شخص کے پاس دھماکا خیز مواد ہے۔

ترجمان کے مطابق جہاز اس وقت یورپی فضائی حدود میں داخل ہوچکا تھا جب کینیڈا کے حکام نے سویڈن انتظامیہ کو اس بارے میں اطلاع دی۔ جس پر طیارے کو سٹاک ہوم اترنے کا کہا گیا۔ ان کے بقول جہاز میں 243مسافر،عملے کے 18ارکان اور 13بچے سوار تھے۔

پی آئی اے کے ترجمان کا کہنا تھا کہ ان کی انتظامیہ سٹاک ہوم سے رابطے میں ہے اور اب تک کی اطلاعات کے مطابق ایک پاکستانی نژاد کینیڈین نوجوان کو پولیس نے پوچھ گچھ کے لیے روک رکھا ہے۔ ان کے بقول جہاز پر سوار تمام افراد محفوظ اور خیریت سے ہیں۔

دریں اثناء وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی نے بھی پی آئی اے کے طیارے کی سٹاک ہوم میں لینڈنگ کا نوٹس لیتے ہوئے فضائی کمپنی کے سربراہ اور دیگر حکام سے اس مسئلے کے فوری حل لیے اقدامات کرنے کا کہا ہے۔

XS
SM
MD
LG