رسائی کے لنکس

logo-print

انٹرپول کو مطلوب سعودی دہشت گرد نے ہتھیار ڈال دیے


سعودی عرب نے کہا ہے کہ ملک میں القاعدہ کےسب سےنمایاں مطلوب رُکن نے اپنے آپ کو سعودی حکام کے حوالے کردیا ہے۔

وزارتِ داخلہ کے ایک ترجمان نے بدھ کو بتایا کہ خالد القہتانی نے حکام سے رابطہ کرکے گزارش کی کہ اُنھیں ملک واپس ہوئے اور ہتھیار ڈالنے کی اجازت دی جائے۔

گذشتہ دہائی سے ملک بھر میں ہونے والے حملوں کی لہر کے بعد سعودی حکام القاعدہ کے ارکان کی تلاش میں رہے ہیں۔

سعودی ترجمان نے بتایا کہ القاعدہ کے مطلوب رکن نے اپنے خاندان سے ملاقات کی اور جب اُن کا مقدمہ عدالت کے سامنے پیش ہوگا، حکام اُن کے ہتھیار ڈالنے کے معاملے کو ذہن میں رکھتیں گے۔
قہتانی القاعدہ کے پہلے دہشت گرد ہیں جنھوں نے امریکی خصوصی فورسز کے ہاتھوں القاعدہ کے سرغنے اسامہ بن لادن کی ہلاکت کے بعد اپنے آپ کو حکام کے حوالے کیا ہے۔

وہ القاعدہ کے 47ویں سعودی شہری ہیں جو ملک سے باہر رہتے رہے ہیں اور سعودی عرب کو مطلوب تھے۔

XS
SM
MD
LG