رسائی کے لنکس

logo-print

سعودی ولی عہد کی طرف سے فٹ بال کلب مانچسٹر یونائیٹڈ خریدنے کی تردید


سعودی ولی عہد محمد بن سلمان۔ فائل فوٹو

سعودی عرب کے میڈیا کے وزیر ترکی الشبانہ نے اس بات کی تردید کی ہے کہ سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان پریمئر لیگ فٹ بال کلب ’’مانچسٹر یونائیٹڈ‘‘ خریدنے والے ہیں۔

پیر کے روز سعودی وزیر نے وضاحت کی کہ اس بارے میں مانچسٹر یونائیٹڈ کی محض سعودی ویلتھ فنڈ کے ساتھ سپانسرشپ کے حوالے سے سرسری طور پر گفتگو ہوئی تھی۔ تاہم اس بارے میں کوئی فیصلہ نہیں ہوا تھا۔

اُنہوں نے ایک ٹویٹر پیغام میں واضح کیا ہے کہ سعودی ولی عہد کی طرف سے مانچسٹر کلب خریدنے کے ارادے سے متعلق میڈیا میں شائع ہونے والی رپورٹوں میں کوئی صداقت نہیں ہے۔

مانچسٹر یونائیٹڈ بیس مرتبہ انگلش پریمئر لیگ جیت چکی ہے۔ اس کا مالک امریکہ کا گلیزر خاندان ہے جس نے یہ کلب 2005 میں 79 کروڑ پاؤنڈ یعنی تقریباً ایک ارب دو کروڑ 97 لاکھ ڈالر میں خرید ا تھا۔

برطانوی اخبار ’’سن‘‘ میں اتوار کے روز خبر شائع ہوئی تھی کہ سعودی ولی عہد محمد بن سلمان 3.8 ارب پاؤنڈ یا 4.9 ارب ڈالر میں یہ انتہائی مقبول فٹ بال کلب خریدنے والے ہیں۔ اخبار کا کہنا تھا کہ اس بارے میں پیشکش اکتوبر میں کی گئی تھی تاہم سعودی نژاد صحافی جمال خشوگی کے مبینہ قتل کے باعث یہ ڈیل فوری طور پر طے نہیں ہو سکی تھی اور مانچسٹر یونائیٹڈ سعودی عرب میں سرمایہ کاری کے فورم سے علیحدہ ہو گیا تھا۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG