رسائی کے لنکس

logo-print

اقوام متحدہ سے بحری قزاقی کی روک تھام کے لیے فورس قائم کرنے کا مطالبہ


اقوام متحدہ سے بحری قزاقی کی روک تھام کے لیے فورس قائم کرنے کا مطالبہ

بحری جہازوں کے مالکان کی ایک بھارتی تنظیم نے اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ صومالی قزاقوں سے مقابلے کے لیے ایک خصوصی فورس قائم کرے۔

انڈین نیشنل شپ اونرز ایسوسی ایشن نے پیر کے رو ز کہا کہ انہوں نے تحریری طورپر بھارتی حکومت سے کہا ہے وہ اقوام متحدہ کے عہدے داروں کے پاس یہ معاملہ اٹھائے۔

ایسوسی ایشن نے کہا کہ قزاقی سے بین الاقوامی پیمانے پر جہاز رانی کی صنعت کو انشورنس، تاوان ، جہازوں پر محافظوں کی تعیناتی اور قزاقوں سے بچنے کے لیے طویل راستے اختیار کرنے پر ہر سال تقریباً 9 ارب ڈالر کے اخراجات برداشت کرنے پڑ رہے ہیں۔

تنظیم کا کہناہے کہ انہوں نے یہ تجویز پیش کی ہے کہ اقوام متحدہ کی خصوصی فورس کے محافظوں کو تجارتی جہازوں پر تعینات کیا جائے اور انہیں ایسے جہازوں پر چڑھنے کا اختیار حاصل ہو، جس پر یہ شبہ ہوکہ ان میں قزاق موجود ہوسکتے ہیں۔

کئی برسوں سے بحری جہازوں کو یرغمال بنانے کی کارروائیوں مصروف صومالی قزاقوں نے اب اپنی کارروائیوں کا دائرہ بحیرہ عرب اور بحر ہند تک بڑھا دیا ہے جو صومالیہ کی ساحل پر واقع ان کے مراکز سے ہزاروں کلومیٹر کے فاصلے پر ہیں۔

بین الاقوامی سمندروں کی نگرانی سے متعلق ادارے کا کہناہے کہ اس وقت صومالی قراقوں کے قبضے میں 15 بحری جہاز اور عملے کے277 افراد موجود ہیں۔

XS
SM
MD
LG