رسائی کے لنکس

logo-print

خودکش حملے کے زخمی صومالی باشندے ترکی پہنچ گئے


خودکش حملے کے زخمی صومالی باشندے ترکی پہنچ گئے

ترک حکومت نے کہاہے کہ اس نے صومالیہ کے دارالحکومت موگادیشو میں اس ہفتے مہلک خودکش حملے میں شدید زخمی ہونے والے 36 افراد کو علاج معالجے کے لیے ترکی پہنچا دیا ہے۔

ترک وزارت خارجہ کے ایک ترجمان نے وائس آف امریکہ کی صومالی سروس کو جمعرات کے روز بتایا کہ انقرہ صومالیہ سے ہر ممکنہ حدتک زخمیوں کو اپنے ملک کے اسپتالوں میں منتقل کرنے کے اقدامات کررہا ہے۔

عسکریت پسند تنظیم الشباب نے منگل کے روز وزارت تعلیم کی وزارت پر خودکش حملے کی ذمہ داری قبول کرنے کا دعویٰ کیا ہے جس میں کم ازکم 72 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

ہلاک ہونے والوں میں زیادہ تر طالب علم تھے جو وہاں یہ جاننے کے لیے جمع تھے کہ آیا ان کا نام اس فہرست میں شامل ہے جنہوں نے ترکی سے وظائف حاصل کرنے کا امتحان پاس کر لیا ہے۔

ترک وزارت خارجہ کے ترجمان نے حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا اس طرح کی کارروائیاں ان کے ملک کو صومالیہ کی مدد سے باز نہیں رکھ سکتیں۔

اگست میں قحط زدہ ملک صومالیہ کے دورے کے موقع پر ترک وزیر اعظم رجب طیب اردوان نے وعدہ کیاتھا کہ ان کا ملک انسانی بھلائی کی امداد فراہم کرنے کے ساتھ ساتھ اسپتال، اسکول اور بنیادی ڈھانچہ تعمیر کرنے میں مدد دے گا۔

XS
SM
MD
LG