رسائی کے لنکس

logo-print

حکیم اللہ محسود ڈرون حملے میں زخمی


پاکستان میں انٹیلی جنس کے ذرائع نے کہا ہے کہ پاکستانی طالبان کا لیڈر حکیم اللہ محسود جمعرات کے روز امریکہ کے ایک مبیّنہ بلا ہواباز طیارے یا ڈرون کے حملے میں زخمی ہو گیا ہے۔

ان ذرائع نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر کہا ہے کہ حملے کا ہدف جنوبی وزیرستان کے علاقے میں جنگ جوؤں کا ایک تربیتی کیمپ تھا۔

محسود کے حالت کے بارے میں خود طالبان کی فراہم کردہ اطلاعات میں تضاد ہے۔جنگ جو گروپ کے کچھ ذرائع نے محسود کے زخمی ہو جانے کی اطلاعات کی تصدیق کی ہے اور کہا ہے کہ اب اُس کا علاج ہو رہا ہے۔

طالبان کے کچھ دوسرے ذرائع نے ایک آڈیو ٹیپ جاری کیا ہے، جس کے بارے میں اُن کا کہنا ہے کہ ریکارڈنگ محسود کی آواز میں ہے، اور جس نے کہا ہے کہ وہ زندہ ہے۔ تاہم اس ٹیپ میں نہ تو کسی تاریخ کا ذکر ہے اور نہ ہی کسی ڈرون کے حملے کا۔

جمعرات کے روز اُس حملے میں کم سے کم 12 مبیّنہ جنگ جو ہلاک ہوئے تھے۔

سیکیورٹی سے متعلق عہدے داروں نے کہا ہے جمعے کے روز افغان سر حد کے قریب پاکستان کے قبائلی علاقے، شمالی وزیرستان میں امریکی ڈرون کے ایک اور حملے میں پانچ مزید جنگ جو مارے گئے۔

XS
SM
MD
LG