رسائی کے لنکس

روس کے ساتھ مشترکہ مفادات کو واضح کرنا چاہتے ہیں: ٹلرسن


شام کے معاملے پر روس کے ساتھ پیدا ہونے والی کشیدگی کے ماحول میں امریکہ کے وزیرخارجہ ریکس ٹلرسن کی ماسکو میں اپنے ہم منصب سرگئی لاوروف سے ملاقات شروع ہوئی۔

منصب سنبھالنے کے بعد ٹلرسن اپنے پہلے دورہ روس کے سلسلے میں منگل کو ماسکو پہنچے تھے۔

ملاقات سے قبل ٹلرسن کا کہنا تھا کہ وہ ایک کھلے ماحول میں گفتگو کے منتظر ہیں تا کہ "ہم امریکہ اور اور روس کے تعلقات کو یہاں سے آگے بڑھانے کے لیے بہتر راہ متعین کر سکیں۔"

روس کے ساتھ در آنے والے شدید اختلافات کا اعتراف کرتے ہوئے ٹلرسن کا کہنا تھا کہ امریکہ مشترکہ مفادات کو واضح اور اختلافات کو کم کرنے کا جائزہ لینا چاہتا ہے۔ ان کے بقول رابطوں کے ذرائع ہمیشہ کھلے رہیں گے۔

اس موقع پر روسی وزیرخارجہ سرگئی لاوروف کا کہنا تھا کہ امریکہ کو گزشتہ ہفتے شامی حکومت کے فضائی اڈے پر کیے گئے کروز میزائل کارروائی جیسا اقدام مزید نہیں کرنا چاہیے۔

واشنگٹن اس کارروائی کو شامی فضائیہ کی طرف سے شہریوں پر "کیمیائی حملے" کا ردعمل قرار دیتا ہے۔

ٹلرسن صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی انتظامیہ کے پہلے عہدیدار ہیں جو ماسکو کا دورہ کر رہے ہیں۔

ادھر روس کے صدر ولادیمر پوتن کے ایک ترجمان نے کہا ہے کہ صدر دورے پر آئے ہوئے امریکی وزیر خارجہ سے ملاقات کریں گے۔

قبل ازیں کریملن نے اس بابت تبصرہ کرنے گریز کیا تھا کہ آیا پوتن ٹلرسن سے ملاقات کریں گے یا نہیں۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG