رسائی کے لنکس

logo-print

وسطی امریکہ کے سمندری طوفانوں کے متاثرین کے لیے 43 ملین ڈالر کی اپیل


ہنڈوراس میں سمندری طوفان آئیوٹا سے متاثرہ ایک خاتون گیلے کپڑوں کو سکھانے کے لیے لٹکا رہی ہے۔ 19 نومبر 2020

وسطی امریکہ میں انسانی ہمدردی کے لیے کام کرنے والے گروپس نے کہا ہے کہ انہیں دو طاقت ور سمندری طوفانوں سے متاثر ہونے والے تقریباً ساڑھے چھ لاکھ لوگوں کے لیے لگ بھگ 43 ملین ڈالر کی ضرورت ہے۔

عالمی ادارے یونیسیف کے ڈائریکٹر برنٹ آسن نے کہا ہے کہ آگے پیچھے آنے والے سمندری طوفان ایٹا اور آئیوٹا وسطی امریکہ میں بالخصوص بچوں کے لیے بہت تباہ کن ثابت ہوئے ہیں۔

وسطی امریکہ کے ساحلی علاقوں سے سب سے پہلے ایٹا ٹکرایا تھا جس سے ہنڈورس، نکاراگوا، گوئٹے مالا، بلیز، ایل سلواڈور، کوسٹا ریکو اور پاناما میں 46 لاکھ افراد متاثر ہوئے۔

اس کے دو ہفتوں کے بعد ایک اور سمندری طوفان آئیوٹا آیا، جس نے پہلے سے ہونے والے نقصانات میں مزید اضافہ کر دیا۔ یونیسف کا کہنا ہے کہ ان دو طاقت ور طوفانوں کے بعد اس علاقے میں تقریباً 20 لاکھ بچوں کی صحت اور نشو و نما کے لیے مسائل پیدا ہو گئے ہیں۔

یونیسف کے ڈائریکٹر آسن کہتے ہیں کہ جیسے جیسے متاثرہ علاقوں سے پانی اترے گا، حالات مزید خراب ہوتے جائیں گے۔ اس لیے ہر آنے والے دن کے ساتھ بچوں اور خاندانوں کے لیے انسانی ہمدردی کی امداد کی ضرورت بڑھتی چلی جائے گی۔

ہنڈورس میں سمندری طوفان آئیوٹا سے آنے والے سیلابوں نے روز مرہ زندگی کا نظام درہم برہم کر دیا ہے۔ 18 نومبر 2020
ہنڈورس میں سمندری طوفان آئیوٹا سے آنے والے سیلابوں نے روز مرہ زندگی کا نظام درہم برہم کر دیا ہے۔ 18 نومبر 2020

یونیسف کا کہنا ہے کہ وہ نکاراگوا، بلیز، گوئٹے مالا اور ہنڈوراس میں چھ لاکھ سے زیادہ افراد کو انسانی ہمدردی کی بنیاد پر امداد فراہم کرنے کے منصوبوں پر کام کر رہا ہے۔ عالمی ادارے کا کہنا ہے کہ مسلسل بارشوں اور کرونا وائرس کی عالمی وبا کی پابندیوں کی وجہ سے کئی متاثرہ علاقوں میں انہیں دشواریوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

اس سے پہلے خبروں میں بتایا گیا تھا کہ آئیوٹا کے ساتھ شدید بارشیں اور سیلاب بھی آئے ہیں جن سے نکاراگوا اور ہنڈوراس میں سیلابی ریلوں اور مٹی کے تودے گرنے کا سلسلہ جاری ہے اور دو لاکھ سے زیادہ لوگوں کو اپنا گھر بار چھوڑ کر محفوظ مقامات کی طرف جانا پڑا ہے۔

نکاراگوا، ہنڈوراس، کولمبیا، ایل سیلواڈور اور پاناما نے، آئیوٹا سے ہلاکتوں کی تصدیق کی ہے ۔سمندری طوفان آئیوٹا پیر کے روز نکاراگوا کے ساحلوں سے ٹکرایاتھا۔ اس سے کوئی دو ہفتے قبل، ایٹا نامی سمندری طوفان سے بارشوں اور مٹی کے تودے گرنے سے یہاں تباہی مچ گئی تھی۔

اِیٹا سے پورے وسطی امریکہ میں ایک سو سے زیادہ ہلاکتیں رپورٹ ہوئیں تھیں۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG