رسائی کے لنکس

logo-print

لاطینی ملکوں کو وینٹی لیٹرز اور کرونا ٹیسٹ مشینری بھیجی جا رہی ہے: ٹرمپ


Vice President Mike Pence (file)

ایک ایسے وقت میں، جب کرونا وائرس کی وبا نے دنیا بھر میں پنجے گاڑ دیے ہیں، امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے جمعے کے دن اپنے ایک ٹوئٹر پیغام میں کہا ہے کہ امریکہ ہنڈوراس، ایکواڈور، انڈونیشیا اور السلواڈور کو وینٹی لیٹر بھیجے گا۔

ٹرمپ نے کہا ہے کہ ''حالیہ دنوں میں، امریکہ نے متعدد وینٹی لیٹرز بنائے ہیں'' جنھیں ہم ایکواڈور کو بھیجیں گے۔ انھوں نے بتایا کہ امریکہ ایکواڈور کی کئی طرح سے مدد کر رہا ہے۔

صدر ٹرمپ نے کہا کہ وینٹی لیٹرز اور کرونا وائرس کے ٹیسٹ کرنے میں امریکہ ہنڈوراس کے صدر جوہان آرلینڈو ہرناڈیز کی مدد کرے گا۔

رائٹرز کی رپورٹ کے مطابق، امریکہ السلواڈور کو بھی وینٹی لیٹرز اور دیگر ضروری طبی آلات بھیجے گا، تاکہ کرونا وائرس سے پیدا ہونے والی تنفس کی تکالیف میں مبتلا مریضوں کی مدد کی جا سکے۔

ٹرمپ نے لاطینی امریکہ کے ان ملکوں کو سراہا جو غیر قانونی تارکین وطن کو امریکہ جانے سے روکنے کی کوششیں کی جا رہی ہیں۔

اس سے قبل انڈونیشیا کے صدر جوکو ویدودو نے صدر ٹرمپ سے فون پر بات کی۔ ٹرمپ نے ٹوئٹ میں بتایا کہ ویدودو نے کرونا کے مریضوں کی سانس کی تکالیف دور کرنے میں مدد دینے کے لیے، امریکہ انڈونیشیا کو درکار طبی آلات فرہم کرے گا۔

گزشتہ ہفتے ٹرمپ نے میکسیکو کو معقول تعداد میں وینٹی لیٹرز دینے کی پیش کش کی تھی، ساتھ ہی انھوں نے ایران کو ایسی ہی مدد کی بھی پیش کش کی۔

اس سے قبل، پاکستان سے موصولہ اطلاعات کے مطابق، کرونا کے انسداد کے سلسلے میں امریکہ نے بدھ کے روز وینٹی لیٹرز دستیاب کرنے کی پیش کش کی ہے، ساتھ ہی کرونا ٹیسٹ کے نتائج کم وقت میں تیار کرنے والی مشینیں بھی دی جائیں گی۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG