رسائی کے لنکس

logo-print

پاکستانی فلم ’زندگی کتنی حسین ہے‘ کی نمایاں موسیقی


نمونے کے طور پر، تقریب میں فلم کے 7 گانے ریلیز کئے گئے۔ ان میں’زندگی کتنی حسین ہے‘ یعنی ٹائٹل سانگ ایک منقبت ’علی علی‘ اور بھارتی گلوکار سکھ ویندر سنگھ کی مدھر آواز میں گایا ہوا ’کتنی بار‘ شامل ہے

پاکستان فلم انڈسٹری کی رونقیں تیزی سے بحال ہو رہی ہیں۔ فلموں کی پروموشن، میوزک لانچنگ اور اس جیسی دیگر فلمی تقریبات کا انعقاد بھی اب عام ہوتا جا رہا ہے۔ پھلتی پھولتی صنعت کے لئے یہ سب بہت ’پوزیٹیو‘ ہیں۔

پاکستانی انڈسٹری کی ترقی کے اس سفر میں اب ایک نئی فلم کا نام بھی جڑ گیا ہے۔ یہ نام ہے ’زندگی کتنی حسین ہے‘ کراچی میں بدھ کو اس کی موسیقی پر مبنی ایک تقریب ہوئی۔

فلم، ٹی وی، فیشن، میوزک اور گلیمر کی دنیا میں چمکنے والے درجنوں ستاروں نے اس تقریب میں شریک ہو کر چار چاند لگائے۔

فلم کے ڈائریکٹر رفیق احمد چوہدری نے بتایا کہ فلم ’زندگی کتنی حسین ہے‘ فیملی ڈرامہ ہے جس کی کہانی ایک نوجوان جوڑے کے گرد گھومتی ہے جن کی زندگی میں کھٹی میٹھی لڑائیاں بھی ہیں، رومنس بھی اور پریشانیاں بھی۔

ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ ’’فلم کی کامیابی میں جہاں بہترین اداکار، ہدایتکار، عمدہ کہانی اور اچھی پروڈکشن کی ضرورت ہوتی ہے وہیں فلم میں پیش کئے جانے والے گیت بھی فلم کی کامیابی میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔ اسی بات کو مد نظر رکھتے ہوئے فلم کے ڈائریکٹر انجم شہزاد نے فلم میں موجود تمام گیتوں کو انتہائی مہارت سے عکس بند کیا ہے جو یقیناً سننے والوں کو داددینے پر مجبور کردیں گے۔‘‘

فلم کے میوزک کے حوالے سے ان کا کہنا تھا ’’خوابوں کی تکمیل کیلئے جدوجہد کرتے کم عمر شادی شدہ جوڑے پر مشتمل اس کہانی میں روایتی بالی ووڈ اسٹائل کے آئٹم نمبرز کی بجائے رومانس اور ٹریجڈی سانگز کے علاوہ خصوصی طور پر صوفی کلام بھی شامل کیا گیا ہے جو پاکستانی فیملیز کو سینمائوں میں کھینچ لائے گا۔‘‘

فلم کے 6 میوزک ٹریک ہیں۔ سہیل جاوید اور فرحان شاہ نے اپنی آواز میں دو گیت گائے ہیں۔ موسیقار مصطفیٰ زاہد نے فلم کاٹائٹل سانگ ’اُداسیاں‘ ریکارڈ کرایا ہے۔

فلم کا سائونڈ ٹریک عدنان دھول اور رابی احمد نے ترتیب دیا ہے۔ یہ دونوں میوزک کمپوزر بھی ہیں اور مقبول بینڈ’سوچ‘ سے وابستہ ہیں۔

افتتاحی تقریب میں فلم کے 7 گانے ریلیز کئے گئے۔ ان میں’زندگی کتنی حسین ہے‘ یعنی ٹائٹل سانگ ایک منقبت’علی علی‘ اور بھارتی گلوکار سکھ ویندر سنگھ کی مدھر آواز میں گایا ہوا ’کتنی بار‘ شامل ہے۔

عید الاضحیٰ پر ’جیو فلمز‘ کے بینر تلے نمائش کیلئے پیش کی جانے والی فلم ’زندگی کتنی حسین ہے‘ آسٹریلوی کمپنی ’آرسی فلمز‘ اور ’کنگ فشر فلمز‘ کی مشترکہ پروڈکشن ہے۔

اس موقع پر فلم کے ڈائریکٹر انجم شہزاد نے وائس آف امریکہ سے گفتگو میں کہا کہ’’جب یہ نوجوان جوڑا ایک ساتھ ہوتا ہے تو زندگی حسین ہوتی ہے۔ لیکن جب ایک دوسرے سے جدا ہو جاتا ہے تو زندگی خوبصورت نہیں رہتی۔ یہی فلم کا بنیادی خیال ہے۔ فلم میں یہ دکھانے کی کوشش کی گئی ہے کہ مشکلات اور تلخیوں کے باوجود زندگی خوبصورت نعمت ہے۔‘‘

انجم شہزاد نے یہ بھی بتایا کہ فلم کی کہانی عبدالخالق نے چار سال پہلے لکھی تھی جبکہ شوٹنگ کا آغاز گزشتہ سال اکتوبر میں ہوا تھا۔

اس موقع پر فلم کی ہیروئن سجل علی نے کہا کہ ’’میں نے بھارت کی فلموں میں بھی کام کیا ہے اور پاکستانی ڈراموں میں بھی جبکہ اب ملکی فلم میں کام کرنے کا موقع ملا ہے۔ دونوں ملکوں میں زیادہ فرق نہیں بس یہ ہے کہ پاکستانی فلموں کو تکنیکی طورپربہترکرنے کی ضرورت ہے۔‘‘

تقریب میں ’زندگی کتنی حسین ہے‘ کا ٹریلر اور تین گانے بھی دکھائے گئے جنہیں تقریب کے شرکا نے خوب سراہا۔ سجل علی کے علاوہ فلم کے ہیرو فیروز خان، علی خان، شفقت چیمہ، نیراعجاز، جبریل اور راشد فاروقی کاسٹ میں نمایاں ہیں۔

XS
SM
MD
LG