رسائی کے لنکس

logo-print

شام کے شمالی حصے میں امریکہ اور ترک فورسز کی مشترکہ گشت کی تیاری


امریکی وزیر دفاع جم میٹس، پینٹاگان میں نامہ نگاروں کے سوالات کا جواب دے رہے ہیں۔ 27 جولائی 2018

امریکہ کے وزیر دفاع جم میٹس نے کہا ہے کہ شام کے شمالی علاقے میں ترکی کی فورسز کو شام کے شمالی علاقے میں امریکی فورسز کے مشترکہ گشت کی تیاری کے لیے سازو سامان ترکی ایک مرکز پر پہنچا دیا گیا ہے۔

میٹس نے جمعے کے روز نامہ نگاروں کو بتایا کہ تربیتی ساز وسامان انکرلک کے ہوائی اڈے پر اتار دیا گیا ہے۔ وہ ترکی کے جنوبی حصے میں قائم اس فضائی مرکز کا ذکر کر رہے تھے جو امریکہ کے استعمال میں تھا۔

میٹس نے کہا کہ فوجیوں کی تربیت چند ہفتوں میں شروع ہو جانی چاہیے۔

انہوں نے کہا میرا نہیں خیال کہ اس کام پر مہینے لگیں گے۔

یہ واضح نہیں ہے کہ ترک فورسز کی تربیت کے بعد امریکہ اور ترکی کی فورسز کا شام میں مشترکہ گشت کب شروع ہو گا۔

پچھلے مہینے امریکہ نے شورش زدہ شام کے شمالی شہر منبج کے نزدیک ترکی کے ساتھ تعاون پر مبنی لیکن الگ الگ گشت شروع کیا تھا۔

یہ شہر ترک سرحد کے قریب واقع ہے۔

اس شہر میں کرد ملیشیا نے اپنے ٹھکانے بنا رکھے ہیں۔ واشنگٹن کرد ملیشیا کی حمایت کرتا ہے جب کہ انقرہ کا کہنا ہے کہ وہ ترک دشمن دہشت گرد ہیں۔

پنٹاگان کا کہنا ہے کہ اس گشت کا مقصد منبج کی دیر پاسیکیورٹی کی حمایت کرنا اور نیٹو کے اتحادی ترکی سے وعدوں کی پاسداری کرنا ہے۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG