رسائی کے لنکس

logo-print

فضل الرحمٰن نے بطور نگراں وزیراعلیٰ سندھ حلف اٹھا لیا


گورنر سندھ نے فضل الرحمٰن سے ان کے عہدے کا حلف لیا

کراچی میں ہفتہ کو گورنر ہاﺅس سندھ میں منعقدہ تقریب میں گورنر سندھ محمد زبیر نے فضل الرحمن سے اس عہدے کا حلف لیا۔ تقریب میں سبکدوش ہونے والے وزیر اعلیٰ سید مراد علی شاہ، اسپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج دررانی، ڈپٹی اسپیکر سندھ اسمبلی شہلا رضا، میئر کراچی وسیم اختر اور سابق صوبائی وزراء نے شرکت کی.

نگراں وزیر اعلیٰ سندھ فضل الرحمن نے اپنے عہدے کا حلف اٹھانے کے بعد گورنر سندھ محمد زبیر سے ملاقات کی۔

ترجمان گورنر ہاؤس کے مطابق 25 جولائی کو ہونے والے انتخابات کو صاف و شفاف اور منصفانہ بنانے کے اقدامات، تمام سیاسی جماعتوں کو انتخابات میں بھرپور حصہ لینے کے یکساں مواقع کی فراہمی، پولنگ والے دن امن و امان کو یقینی بنانے سمیت باہمی دلچسپی کے دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

گورنر سندھ نے امید ظاہر کی کہ نگراں حکومت احسن طریقے سے اور عوام کی توقعات کے مطابق اپنے فرائض ادا کرے گی۔

گورنر سندھ نے مزید کہا کہ آئندہ انتخابات "ہماری سیاسی تاریخ کا اہم ترین موڑ ثابت ہوں گے کیونکہ یہ ایک ایسے وقت ہورہے ہیں جب گزشتہ 5 سال کے دوران امن و امان کے قیام اور معاشی ترقی و خوشحالی کے لئے کئی ٹھوس اقدامات کئے گئے ہیں۔"

فضل الرحمن سندھ کے ساتویں نگراں وزیر اعلیٰ ہیں جن کی تقرری حزب اقتدار اور حزب مخالف کے متفقہ فیصلے سے کی گئی.

وفاقی نگراں حکومت کے بعد اب تک سندھ واحد صوبہ ہے جہاں اتفاق رائے کے بعد صوبائی نگراں وزیراعلیٰ کا تقرر ہوا ہے. دوسرے مرحلے میں نگراں وزیر اعلیٰ کابینہ کے اراکین بھی مقرر کریں گے۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG