رسائی کے لنکس

logo-print

ایران کا نیا جوہری پلانٹ نصب کرنے کا اعلان


ایران کے نائب صدر اور جوہری پروگرام کے سربراہ علی اکبر صالحی کا کہنا ہے کہ ان کا ملک آئندہ برس مارچ تک یورینیم کی افزودگی کے لیے ایک نئی تنصیب پر کام کا آغاز کر دے گا۔

ایرانی میڈیا کے مطابق اتوار کو کابینہ کے اجلاس کے بعد اکبر صالحی نے بتایا کہ یہ تنصیب اْس منصوبے کا حصہ ہے جس کے تحت یورینیم افزودہ کرنے کے لیے دس نئے پلانٹ تعمیر کیے جائیں گے۔ نائب صدر کا کہنا تھا کہ ان تنصیبات کے لیے زمین کا انتخاب کر لیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ اس وقت ایران میں یورینیم افزودہ کرنے کی ایک تنصیب ناتانز میں واقع ہے جب کہ ایسی ایک اور تنصیب کی تعمیر قُم میں جاری ہے۔ ایران کا کہنا ہے کہ آئندہ 15 برسوں میں اس کو توانائی کی ضروریات پوری کرنے کے لیے 20 تنصیبات کی ضروت ہو گی۔

امریکہ سمیت کئی مغربی ممالک کا دعویٰ ہے کہ ایران جوہری ہتھیار بنانے کی کوشش کر رہا ہے جب کہ تہران ان الزامات کی تردید کرتا آیا ہے اور اس کا کہنا ہے کہ ایران کا جوہری پروگرام پر امن مقاصد کے لیے ہے۔

XS
SM
MD
LG