رسائی کے لنکس

logo-print

کراچی میں یکے بعد دیگرے دو ہلاکت خیز دھماکے


کراچی میں پانچ فروری کو ایک بس پر موٹر سائیکل بم حملے کے بعد ایک شخص ماتم کر رہا ہے

کراچی میں جمعے کے روز یکے بعد دیگرے دو طاقت ور بم دھماکوں میں اطلاعات کے مطابق کم ازکم 25 افراد ہلاک اور ایک سو سے زیادہ زخمی ہوگئے ہیں۔ پہلے حملے کا ہدف شارع فیصل پرشیعہ زائرین کی ایک بس تھی جو چہلم کے مرکزی جلوس میں شرکت کے لیے جارہی تھی۔

دھماکے کی نوعیت کے بارے میں متضاد اطلاعات ملی ہیں لیکن پولیس ابھی اس واقعے کی تفتیش میں مصروف تھی کہ تقریباً ایک گھنٹے بعد شہر کے جناح ہسپتال کی پارکنگ میں اس وقت ایک زوردار دھماکا ہواجب پہلے حملے کے زخمیوں کو ایمبیولینسوں کے ذریعے یہاں منتقل کیا جارہا تھا۔

اس دھماکے میں بھی کم ازکم سات افراد کے مرنے کی اطلاعات ہیں تاہم صورت حال ابھی تک پوری طرح واضح نہیں ہوسکی ہے۔

واضح رہے کہ گذشتہ سال 28 دسمبر کو ایم اے جناح روڈ پر عاشورہ کے مرکزی ماتمی جلوس میں ہونے والے دھماکے میں 40 افراد ہلاک ہوگئے تھے جب کہ اس کے بعد پرتشدد ہنگاموں میں شہر کے مختلف حصوں میں سینکڑوں دکانوں کو نذر آتش کردیا گیاتھا اور جمعے کے روز یہ دھماکا ایک ایسے وقت ہوا جب شیعہ برادری نے شہر میں شہدائے کربلا کے چالیسویں کی مناسبت سے جلوس کا اہتمام کررکھا ہے۔

XS
SM
MD
LG