رسائی کے لنکس

logo-print

کراچی میں ہلاکتوں کے بعد کشیدگی


کراچی میں ہلاکتوں کے بعد کشیدگی

ملک کے اقتصادی مرکز اور سب سے بڑے شہر کراچی میں ٹارگٹ کلنگ یا ہدف بنا کر قتل کرنے کے حالیہ واقعات کے بعد شہر میں ایک مرتبہ پھر کشیدگی پائی جاتی ہے۔ گذشتہ شب متحدہ قومی موومنٹ کے ایک ذیلی دفتر پر حملے کے بعد اس کشیدگی میں اضافہ ہوا تھا۔

وزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے کہا ہے کہ ٹارگٹ کلنگ کے واقعات کے خلاف سندھ کی تمام سیاسی جماعتوں کو قیادت کے خلاف ایک موثر حکمت عملی اپنانے کی ضرورت ہے اور اُنھوں نے تمام متعلقہ قانون نافذ کرنے والے اداروں کو اس طرح کے واقعات کے انسداد کے لیے اپنا کردار ادا کرنے کی ہدایت کی ہے۔

دریں اثناء وفاقی وزیر داخلہ نے ہفتے کے روز کراچی میں ایک اعلیٰ سطحی اجلاس کے بعد متحدہ قومی موومنٹ اور عوامی نیشنل پارٹی سمیت دیگر جماعتوں سے پرامن رہنے کی اپیل کی ہے۔ رحمن ملک نے کہا کہ کراچی میں حالیہ ہلاکتوں کا مقصد ملک میں عدم استحکام پیدا کرنا ہے۔

متحدہ قومی موومنٹ نے اپنے دفتر پر حملے کی ذمہ داری عوامی نیشنل پارٹی پر عائد کی ہے لیکن عوامی نیشنل پارٹی اس کی تردید کرتی ہے۔

XS
SM
MD
LG