رسائی کے لنکس

logo-print

کوسوو کے صدر پر جنگی جرائم کی فرد جرم عائد، مستعفی ہونے کا اعلان


فائل فوٹو

کوسوو کے صدر ہاشم تاچی نے تصدیق کی ہے کہ ان پر جنگی جرائم اور انسانیت کے خلاف جرائم پر فردِ جرم عائد کی گئی ہے۔

جمعرات کو ایک پریس کانفرنس سے خطاب میں ہاشم تاچی کا کہنا تھا کہ فردِ جرم عائد ہونے کے باعث وہ اپنے عہدے سے مستعفی ہو رہے ہیں۔

واضح رہے کہ ہاشم تاچی البانین نژاد عسکریت پسندوں پر مشتمل گوریلا گروپ کوسوو لبریشن آرمی (یو سی کے) کے کمانڈر تھے۔ اس گروہ نے 99-1998 میں بلغراد کی سیکیورٹی فورسز کے خلاف جنگ لڑی تھی۔

خیال رہے کہ کوسوو لبریشن آرمی کے جنگی جرائم سے متعلق ہیگ میں خصوصی پراسیکیوٹر نے بدھ کو صدر ہاشم تاچی سمیت 10 افراد پر کوسوو کی آزادی کی لڑائی میں جنگی جرائم میں فردِ جرم عائد کی تھی۔

پراسیکیوٹر کے بیان میں کہا گیا تھا کہ فردِ جرم طویل تحقیقات کے بعد عائد کیا گیا ہے۔

اسپیشل پراسیکیوٹر آفس (ایس پی او) نے صدر ہاشم تاچی سمیت دگر ملزمان پر الزام عائد کیا ہے کہ وہ لگ بھگ 100 افراد کے قتل میں ملوث ہیں۔ اس کے ساتھ ساتھ ان پر لوگوں کو لاپتا کرنے، ان کے قتل اور تشدد کے الزامات بھی عائد کیے گئے ہیں۔

کوسوو کی جنگ میں عصمت دری کی شکار ہزاروں خواتین
please wait

No media source currently available

0:00 0:02:24 0:00

اسپیشل پراسیکیوٹر آفس کے مطابق ان جرائم سے کوسوو میں موجود البانین، سرب، روما اور دیگر نسلی اقلیتوں کے سینکڑوں افراد متاثر ہوئے۔

جب کہ ہاشم تاچی پر سیاسی مخالفین کو نشانہ بنانے کا الزام بھی عائد کیا گیا۔

ہاشم تاچی نے ان تمام الزامات یا جرائم میں ملوث ہونے کی تردید کی ہے۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG