رسائی کے لنکس

logo-print

پانامہ لیک کیس کے فیصلے پر پاکستانی کشمیر میں لیگیوں کا جشن


مظفرآباد

پاکستانی کشمیر کے وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر خان نے کارکنوں مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پانامہ کیس میں سپریم کورٹ کے فیصلے نے ملک کو بحران سے نکال دیا ہے

سپریم کورٹ پاکستان کی طرف سے پاناما لیک کیس کے فیصلے کے بعد پاکستانی زیر انتظام کشمیر میں مسلم لیگی کارکنوں نے وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لیے دارالحکومت مظفرآباد اور دوسرے شہروں میں مظاہرے کیے۔

مظفرآباد میں برہان مظفر وانی چوک میں مسلم لیگ ن کے کارکنوں اور وزرا نے جشن منایا اور وزیراعظم میاؓں نواز شریف کے حق میں نعرے لگائے اور عمران خاإن کو تنقید کا نشانہ بنایا۔

پاکستانی کشمیر کے وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر خان نے کارکنوں مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پانامہ کیس میں سپریم کورٹ کے فیصلے نے ملک کو بحران سے نکال دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ تنازعہ کشمیر کے حل کے لئے ایک مضبوط اور خوشحال پاکستان کی ضرورت ہے، جو بقول ان کے، میان ںواز شریف کی حکمرانی میں ہی بن سکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پانامہ کیس میں سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد بازارحصص میں ایک دم تیزی سے ثابت ہوگیا کہ، بقول ان کے، نوازشریف ہی ملک کو اقتصادی طور پر مضبوط بنا سکتے ہیں۔

راجہ فاروق حیدر نے مسلم لیگی کارکون کو ہدایت کی کہ وہ جمعہ کی نماز کی ادائیگی کے بعد سپریم کورٹ کے فیصلے پر اظہار تشکر کے لئے دو دو رکعت نماز نفل ادا کریں۔

اس موقع پر کارکنان کی جانب سے مٹھائیاں بھی تقسیم کی گئیں۔ تاہم، حزب مخالف کی جماعت تحریک انصاف اور پیپلز پارٹی کی طرف سے پانامہ کیس میں سپریم کورٹ کے فیصلے پر فوری طور پر کسی ردعمل اظہار سامنے نہیں آیا۔

تاہم، تحریک انصاف پاکستانی کشمیر کےسربراہ اور سابق وزیر اعظم برسٹرسلطان محمود چوہدری نے بتایا کہ آئیندہ پیر سے پاکستانی کشمیر میں نوازشریف کے استعفے کے لئے احتجاجی مظاہرے کیے جائیں گئے۔؎

،

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG