رسائی کے لنکس

زلزلہ اتوار کے دِن مقامی وقت کے مطابق تقریباً 10 بجے شام گئے آیا، جس کے نتیجے میں جنوبی صوبہٴ کرمان کے ایک گاؤں، سِرچ دہل کر رہ گیا، جو دارالحکومت تہران کے جنوب میں 1100 کلومیٹر (683میل) کے فاصلے پر واقع ہے۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ زلزلے کی وجہ سے آمد و رفت رک گئی ہے

ایران کے سرکاری ذرائع ابلاغ نے اطلاع دی ہے کہ ملک کے جنوب کے ایک دور افتادہ علاقے میں 5.4 شدت کے زلزلے کے بعد علاقے میں بجلی کی ترسیل معطل ہوگئی ہے۔

زلزلہ اتوار کے دِن مقامی وقت کے مطابق تقریباً 10 بجے شام گئے آیا، جس کے نتیجے میں جنوبی صوبہٴ کرمان کے ایک گاؤں، سِرچ دہل کر رہ گیا، جو دارالحکومت تہران کے جنوب میں 1100 کلومیٹر (683میل) کے فاصلے پر واقع ہے۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ زلزلے کی وجہ سے آمد و رفت رک گئی ہے۔

سرکاری ذرائع ابلاغ نے زلزلے کی گہرائی محض 10 کلومیٹر (6.2 میل) کے فاصلے پر بتائی ہے۔ اس میں کہا گیا ہے کہ کسی جانی نقصان کے بارے میں کوئی اطلاع موصول نہیں ہوئی۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ 5.4 کی شدت کا زلزلہ کافی نقصان کا باعث بن سکتا ہے۔

ایران میں زلزلے روز کا معمول ہیں، چونکہ یہ متعدد کلیدی فالٹ لائن پر واقع ہے۔ سنہ 2003 میں 6.6 شدت کے زلزلے کے نتیجے میں بام کا تاریخی شہرزمین بوس ہوگیا تھا، جس میں 26000 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG