رسائی کے لنکس

جنوبی وزیرستان کے مرکزی قصبے میں یوم پاکستان پر مظاہرہ


اسلام آباد میں پشتونوں کا اپنے حقوق کے لیے مظاہرہ۔ فائل فوٹو

شمیم شاہد

قبائلی علاقے جنوبی وزیرستان کے مرکزی انتظامی قصبے وانا میں یوم پاکستان کے موقع پر فاٹا سیاسی اتحاد کے زیر اہتمام ایک احتجاجي مظاہرہ کیا گیا مظاہرے میں وانا کے مختلف علاقوں سے تعلق رکھنے والے قبائلیوں نے شرکت کی

دو درجن سے زائد گاڑیوں میں سوار قبائلی پہلے جلوس کی شکل وانا کے رستم اور دیگر بازاروں میں گئے جہاں پر انہوں نے قبائلیوں کو درپیش سیکیورٹی اور انتظامی مسائل کے فوری حل کے حق میں نعرے لگوائے۔

مظاہرین نے ہاتھوں میں کتبے اور پختون تحفظ تحریک کے سربارہ منظور پشتین کی تصاویر اٹھار رکھی تھی ۔ وانا کے رستم بازار میں مظاہرین سے فاٹا سیاسی اتحاد جنوبی وزیرستان کے سربراہ عارف وزیر، قومی وطن پارٹی جنوبی وزیرستان کے صدر اصغر وزیر اور دیگر راہنماؤں نے خطاب کیا۔

عارف وزیر نے کہا کہ پختون دہشت گردی کے نام پر جاری جنگ سے تنگ آ ہیں۔ اس جنگ میں دہشت گردوں کی بجائے نہ صرف بے گناہ لوگوں کو قتل کیا جا رہا ہے بلکہ پختونخوا بالخصوص قبائلیوں پر زندگی تنگ کی جار ہی ہے انہوں نے کہا کہ دہشتگردی کی جنگ کے نام پر پختونوں پر پابندیاں عائد کی گئی ہے اور ان کو اپنے گھروں تک نہیں چھوڑا جا رہا ہے۔

قومی وطن پارٹی کے رہنما اصغر وزیر نے کہا کہ قبائل آئین اور قانون کے مطابق دیگر شہریوں کے برابر حقوق مانگتے ہیں ان کا کہنا تھا کہ قبائلیوں کو اس ملک کے شہری تسلیم کیا جائے کیونکہ ان کے آباؤ اجداد بھی آزادی کے لئے جدوجہد کرنے والوں میں شامل تھے۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG