رسائی کے لنکس

logo-print

کرونا کا پھیلاؤ جاری، کیا دنیا پھر لاک ڈاؤن کی طرف جا رہی ہے؟


نیوزی لینڈ میں پیر کو مزید دو افراد میں وائرس کی تشخیص ہوئی ہے جس کے بعد وہاں ایکٹو کیسز کی تعداد نو ہو گئی ہے۔ (فائل فوٹو)

دنیا بھر میں کرونا وائرس کے کیسز میں بدستور اضافہ ہو رہا ہے جب کہ وہ ممالک جہاں وبا کے پھیلاؤ میں کمی آنے یا معاشی مشکلات کے باعث لاک ڈاؤن اور دیگر پابندیوں میں نرمی کی گئی تھی وہاں ایک مرتبہ پھر پابندیاں عائد کی جا رہی ہیں۔

نیوزی لینڈ کی وزیرِ اعظم جسٹن آرڈرن نے دو ہفتے قبل ہی کرونا وائرس کو شکست دینے کا دعویٰ کرتے ہوئے ہر قسم کی پابندیاں اٹھانے کا اعلان کیا تھا۔ لیکن ایک مرتبہ پھر وہاں یہ وبا پھیلنا شروع ہو گئی ہے۔

نیوزی لینڈ میں نو افراد قرنطینہ میں

نیوزی لینڈ میں پیر کو مزید دو افراد میں وائرس کی تشخیص ہوئی ہے جس کے بعد وہاں وبا سے متاثرہ زیرِ علاج مریضوں کی تعداد نو ہو گئی ہے۔

حکام کا کہنا ہے کہ وائرس سے متاثر ہونے والے تمام افراد وہ ہیں جو حال ہی میں بیرونِ ملک سے وطن پہنچے ہیں جب کہ اُنہیں قرنطینہ کر دیا گیا ہے۔ تاہم ملک میں ایک مرتبہ پھر کرونا وائرس کے پھیلاؤ کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے۔

نیوزی لینڈ کے حکام نے یہ دعویٰ بھی کیا ہے کہ مقامی سطح پر وائرس کے پھیلاؤ کے شواہد نہیں ملے ہیں۔

چین کے دارالحکومت میں نئے کیسز رپورٹ ہونا شروع

اسی طرح چین میں بھی کرونا وائرس کے نئے کیسز تھم گئے تھے لیکن گزشتہ ایک ہفتے کے دوران دارالحکومت بیجنگ سمیت دیگر شہروں سے نئے کیسز رپورٹ ہونا شروع ہوئے ہیں۔

بیجنگ میں متاثرہ علاقے ایک مرتبہ پھر سیل کیے جا رہے ہیں جب کہ اسکول اور ہر قسم کی تقریبات پر پابندی عائد کر دی گئی ہیں۔

چین کے نیشنل ہیلتھ کمیشن نے پیر کو تصدیق کی ہے کہ مزید 18 افراد میں وائرس کی تشخیص ہوئی ہے۔ اس طرح کرونا سے متاثرہ 89 افراد کا علاج کیا جا رہا ہے جب کہ کرونا کے مشکوک 129 مریضوں کو آئسولیشن میں رکھا گیا ہے۔

پاکستان میں کئی علاقے سیل

پاکستان میں بھی کرونا وائرس سے متاثرہ علاقوں کو سیل کیا جا رہا ہے۔

ملک کے سب سے بڑے شہر کراچی کے علاوہ لاہور، اسلام آباد اور صوبۂ پنجاب اور خیبر پختونخوا کے مختلف علاقوں کو سیل کیا گیا ہے۔

بھارت کی کئی ریاستوں میں اسمارٹ لاک ڈاؤن

بھارت کی ریاست تمل ناڈو کے شہر چنئی اور تین اضلاع میں 30 جون تک کے لیے مکمل لاک ڈاؤن کر دیا گیا ہے۔

حکام کا کہنا ہے کہ بعض بندشوں میں نرمی کے ساتھ ملک بھر میں اسمارٹ لاک ڈاؤن کیا جا رہا ہے۔

آسٹریلیا کی ریاست وکٹوریا میں نئے کیسز کے بعد دوبارہ پابندیاں عائد کی جا رہی ہیں۔ (فائل فوٹو)
آسٹریلیا کی ریاست وکٹوریا میں نئے کیسز کے بعد دوبارہ پابندیاں عائد کی جا رہی ہیں۔ (فائل فوٹو)

آسٹریلیا میں بڑے اجتماع پر پابندی

آسٹریلیا کی ریاست وکٹوریا میں بھی نئے کیسز سامنے آنے پر ایک مرتبہ پھر بڑے مجمعے پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔

حکام نے گھروں میں پانچ افراد سے زیادہ اور عوامی مقامات پر دس افراد سے زیادہ کے جمع ہونے پر پابندی عائد کی ہے۔

میبلرن شہر کی چھ میونسپلٹیز کو 'نو گو زون' قرار دیا گیا ہے۔

وفاقی محکمۂ صحت کے حکام نے شہریوں کو ہدایت کی ہے کہ وہ کرونا وائرس سے متاثرہ میلبرن کی چھ میونسپلٹیز میں نہ جائیں اور وہاں مقیم افراد اپنے علاقے سے باہر نہ نکلیں۔

جنوبی کوریا: پاکستان اور بنگلہ دیش کے لیے ویزا پابندی

جنوبی کوریا میں بھی مزید 17 افراد میں وائرس کی تشخیص ہوئی ہے۔ ایک ماہ کے دوران ایک دن میں رپورٹ ہوںے والے کیسز کی سب سے زیادہ تعداد ہے۔

نئے کیسز سامنے آنے کے بعد جنوبی کوریا نے پاکستان اور بنگلہ دیش کے لیے نئے ویزوں پر پابندی عائد کر دی ہے۔

اسرائیل میں دوبارہ لاک ڈاؤن کا عندیہ

اسرائیل کے وزیرِ اعظم نے ایک بار پھر ملک میں لاک ڈاؤن کا عندیہ دیا ہے۔

اسرائیل میں کرونا وائرس کے کیسز کی تعداد 20 ہزار ہو گئی ہے جس کے بعد وزیرِ اعظم بن یامین نیتن یاہو نے کہا ہے کہ اگر ماسک پہننے اور سماجی دوری کی احتیاط پر عمل درآمد نہ کیا گیا تو نہ چاہتے ہوئے لاک ڈاؤن کی طرف جانا پڑے گا۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG