رسائی کے لنکس

شمالی کوریا سے رہا ہونے والا امریکی طالب علم ہلاک


امریکی طالب علم اوٹو وارم بیئر کو پولیس اہل کار شمالی کوریا کے شہر پیانگ یانگ کی عدالت میں لے جارہے ہیں۔ 16 مارچ 2016

ریاست اوہائیو میں واقع اس کے آبائی شہر سن سینیٹی میں ڈاکٹر وں نے بتایا کہ 22 سالہ اوٹو کے دماغ کو شمالی کوریا میں قید کے دوران شديد چوٹ لگی تھی۔ لیکن یہ واضح نہیں ہو سکا کہ چوٹ کی نوعیت کیا تھی۔

کالج میں زیر تعلم ایک امریکی طالب علم اوٹو وارم بیئر جسے شمالی کوریا نے تقریباً ڈیڑھ سال قید میں رکھنے کے بعد حال ہی میں رہا کیا تھا، ہلاک ہوگیا ہے۔

اس کے خاندان نے پیر کے روز بتایا کہ وارن بیئر پچھلے ہفتے امریکہ پہنچنے کے بعد بے ہوشی میں چلا گیا تھا۔

ریاست اوہائیو میں واقع اس کے آبائی شہر سن سینیٹی میں ڈاکٹروں نے بتایا کہ 22 سالہ اوٹو کے دماغ کو شمالی کوریا میں قید کے دوران شديد چوٹ لگی تھی۔ لیکن یہ واضح نہیں ہو سکا کہ چوٹ کی نوعیت کیا تھی۔

اوٹوکے خاندان نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ ہمارے بیٹے کے ساتھ شمالی کوریا میں جو سفاکانہ سلوک کیا گیا اس کا نتیجہ ہلاکت کے سوا کوئی اور نہیں ہو سکتا تھا۔

شمالی کوریا کا کہنا ہے کہ وارم بیئر، پچھلے سال مارچ میں شمالی کوریا کے ایک ہوٹل سے ایک سیاسی پوسٹر چرانے پر سزا ملنے کے بعد بے ہوشی میں چلا گیا تھا۔

لیکن وارم بیئر کے خاندان نے شمالی کوریا کا دعویٰ مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس کے ساتھ سفاکانہ سلوک کیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ بدقسمتی سے ہمارے بیٹے کو شمالی کوریا میں جس وحشت ناک ظالمانہ سلوک کا سامنا کرنا پڑا، اس کے بعد اس کا نتیجہ اس دکھ کے سوا کوئی اور نہیں ہو سکتا جس کا آج ہمیں سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG